اینکر قتل کیس : عاطف زمان کے بھائی عادل زمان کو عدالت میں شناخت کرلیا گیا

کراچی : مقامی عدالت میں اینکر مرید عباس سمیت دہرے قتل کیس کے ملزم عاطف زمان کے بھائی عادل زمان کو شناخت پریڈ کے دوران گواہ نے پہچان لیا ہے۔

کراچی کی سٹی کورٹ میں اینکر مرید عباس سمیت دو افراد کے قتل کیس میں اہم پیشرفت ہوئی ہے۔ دو گواہوں نے ملزم عاطف زمان کے بھائی عادل زمان کو بھی عدالت میں شناخت کرلیا ہے۔

ملزم کی شناخت پریڈ جوڈیشل مجسٹریٹ ساؤتھ کی عدالت کی گئی۔ گواہ نے بیان دیا کہ خضرت حیات کے ساتھ عاطف زمان سے پیسے لینے بخاری کمرشل گئے تھے۔ عاطف زمان سفید رنگ کی گاڑی میں آیا۔ عاطف زمان نے خضرحیات کو اپنی طرف بلایا اور فائرنگ شروع کردی۔

گواہ نے مزید بتایا کہ عادل زمان بھی فائرنگ کے دوران موٹر سائیکل سے اترا اور بھاگ کر عاطف زمان کی گاڑی بیٹھ گیا۔ خضر حیات پر فائرنگ کے بعد دونوں ایک ہی گاڑی میں بیٹھ کر فرار ہوگئے۔ گولیاں لگنے کے بعد خضر حیات زمین پر لیٹ گیا۔

واضح رہے کہ آٹھ اکتوبر کو کراچی پولیس نے اینکر مرید عباس کے قتل کے مرکزی ملزم عاطف زمان کے بھائی عادل زمان کو گرفتار کر لیا تھا۔

عادل زمان نے پولیس کو ریکارڈ کرائے گئے اپنے ابتدائی بیان میں بتایا کہ مرید عباس کے قتل کے وقت وہ اپنے بھائی عاطف زمان کے ساتھ تھا، ہمارا منصوبہ صرف مرید عباس کو دھمکانے کا تھا۔

عادل زمان نے پولیس کو بتایا کہ بات چیت کے دوران عاطف زمان نے غصے میں فائرنگ کر دی تھی، جس کے بعد میں نے اسے دفتر سے گھر چھوڑا اور اس واقعے کے بعد میں بالا کوٹ چلا گیا تھا۔

ایس ایس پی انویسٹی گیشن طارق دھاریجو نے اس حوالے سے میڈیا کو بتایا تھا کہ مفرور ملزم عادل زمان کو رات گئے کراچی کے علاقے ڈیفنس سے گرفتار کیا گیا، جس سے اس کیس میں تفتیش جاری ہے۔

واضح رہے کہ سالِ رواں 9 جولائی کو کراچی کے علاقے ڈیفنس میں پیسوں کے لین دین کے تنازع پر ملزم عاطف زمان نے ٹی وی اینکر مرید عباس اور ان کے دوست کو فائرنگ کر کے قتل کر دیا تھا۔