جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

پی ٹی آئی کور کمیٹی کا وزیراعظم کے استعفے اور نئے انتخابات کا مطالبہ مسترد

اسلام آباد : پی ٹی آئی کی کور کمیٹی نے وزیراعظم کے استعفے اور نئے انتخابات کا مطالبہ مسترد کردیا، کوئی بھی غیرآئینی مطالبہ قبول نہیں کیا جائے، اگر جے یو آئی نے معاہدہ توڑا تو بھرپور ایکشن کیا جائے۔

وزیراعظم کی سربراہی میں تحریک انصاف کی کور کمیٹی کا اجلاس منعقد ہوا۔ وزیر دفاع اور حکومتی مذاکراتی کمیٹی کے سربراہ پرویز خٹک نے کور کمیٹی کو اپوزیشن سے رابطوں سے متعلق آگاہ کیا۔ وزیر داخلہ اعجاز شاہ نے بریفنگ میں بتایا کہ اسلام آباد کے شہریوں کے حقوق متاثر نہیں ہونے دیں گے۔

ذرائع کے مطابق اجلاس میں کور کمیٹی نے وزیراعظم کے استعفے اور نئے انتخابات کا مطالبہ مسترد کردیا ہے۔ استعفے کے مطالبے کو دیوانے کی بڑھکیں قرار دیا گیا ہے۔

کور کمیٹی کا کہنا تھا کہ اپوزیشن کا کوئی بھی غیرآئینی مطالبہ قبول نہیں کیا جائے گا۔ اپوزیشن کا احتجاج احتساب کا عمل روکنے کی کوشش ہے۔ اپوزیشن کا آئینی حق تسلیم کرتے ہوئے اپوزیشن کو اسلام آباد میں احتجاج کی اجازت دی۔

کور کمیٹی نے فیصلہ کیا ہے کہ آزادی مارچ کے شرکاء جہاں بیٹھے ہیں، وہیں رہیں گے تو حکومت کوئی کارروائی نہیں کرے گی، لیکن اگر جے یو آئی نے معاہدہ توڑا تو بھرپور ایکشن کیا جائے۔

اجلاس میں اداروں کی تضحیک کسی صورت برداشت نہ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ سلامتی کے اداروں کو اپوزیشن کا ٹارگیٹ نہیں بننے دیں گے۔ ادارے پاکستان کی سلامتی اور تحفظ کے ضامن ہیں۔ اداروں کی لازوال قربانیوں کے بدولت پاکستان آگے بڑھا۔ قربیاں نہ دی ہوتیں تو امن قائم نہیں ہوتا۔

کور کمیٹی کا کہنا تھا کہ وزیر اعظم کو گرفتار کرنے کا بیان انتہائی شرمناک اور قابل مذمت ہے۔ وزیر اعظم اپنے لیئے نہیں، قوم کے بچوں کے مستقبل کے لیئے کوشاں ہیں۔

متعلقہ خبریں