جی ٹی وی نیٹ ورک
اہم خبریں

فلیگ شپ ریفرنس: نیب نے شہادتیں مکمل ہونے کا بیان دے دیا

احتساب عدالت میں نوازشریف کے خلاف فلیگ شپ ریفرنس میں نیب نے شہادتیں مکمل ہونے کا بیان دے دیا، العزیزیہ ریفرنس میں حتمی دلائل دیتے ہوئے نیب پرایسکیورٹر نے کہاکہ ملزمان کی جانب سے پیش کی گئی وضاحت جعلی تھی اورمنی ٹریل بھی غلط ثابت ہوا ملزم نے بے نامی دارکے ذریعے اثاثے چھپائے آفشورکمپنیوں کے اصل مالک کو بھی چھپایا۔

احتساب عدالت کے جج ارشد ملک نے نوازشریف کے خلاف ریفرنس کیس سماعت کی، فلیگ شپ ریفرنس میں ڈپٹی پراسیکیوٹر جنرل نیب سردارمظفرنے شہادتیں مکمل ہونے کا بیان دیا۔ جس کے بعد نیب پراسیکیوٹرواثق ملک نے العزیزیہ اسٹیل مل ریفرنس میں حتمی دلائل کا آغا کیا۔

نیب پراسیکیوٹرنے وائٹ کالرکرائم کا مقدمہ قراردیتے ہوئے کہاکہ بڑے منظم طریقے سے جرم کیا گیا ہے سپریم کورٹ میں کیس آنے سے پہلے ملزمان نے بیرون ملک اثاثے ظاہرنہیں کیے، ملزمان کو سپریم کورٹ، جے آئی ٹی اورنیب میں وضاحت کا موقع دیا گیا تاہم پیش کی گئی وضاحت جعلی نکلی اور منی ٹریل بھی غلط ثابت ہوئی۔

ملزم نے بے نامی دارکے ذریعے اثاثے چھپائے ، نیب پراسیکیوٹرکا کہنا تھاکہ 2010 سے2017 تک نوازشریف کو187بلین کی رقم بیرون ملک سے بھیجی گئی حکمرانوں کے پاس اتنی زیادہ دولت اکٹھی ہوتوسوال پوچھا جاتا ہے جج ارشد ملک نے کہاکہ یہاں بھی توجواب ہی دیا ہے کہ ہماری طرف سے جواب ہے، کیا نیب نے اس رقوم کومنجمد کیا؟ یا کچھ بھی نہیں کیا یہ رقوم اب بھی بینک میں موجود ہیں؟

نیب پراسیکیوٹر نے کہاکہ اکاؤنٹس منجمد نہیں کیے تاہم اب ان اکاؤنٹس میں بہت کم رقم پڑی ہے، نیب پرایسکیورٹر نے ٹیکس ریکارڈ، بینک اکاؤنٹس اورمہران رمضان ٹیکسٹائل کے ریکارڈ سے متعلق گواہوں کے بیانات کی تفصیلات سے آگاہ کیا۔
نوازشریف آج عدالت پیش نہیں ہوئے وکلاء کی جانب سے حاضری سے استثنی کی درخواست دائرکی گئی۔

 

متعلقہ خبریں