جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

وزیراعظم کی زیر صدارت قومی سلامتی کمیٹی کے اجلاس کا اعلامیہ جاری

کمیٹی

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان کی صدارت میں قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس ہوا، اجلاس میں سینئر وفاقی وزرا اور سروسز چیفس نے شرکت کی۔

قومی سلامتی کمیٹی اجلاس میں افغانستان کی حالیہ صورت حال پر غور کیا گیا، شرکا کو افغانستان کی صورت حال، پاکستان اور خطے پر ممکنہ اثرات سے متعلق بریف کیا گیا، اجلاس میں خطے کی مجموعی سیکیورٹی صورت حال کا بھی جائزہ لیا گیا۔

بریفنگ میں بتایا گیا کہ پاکستان افغانستان میں کئی دہائیوں سے جاری تنازعات سے متاثر رہا ہے۔

اجلاس کے شرکا کا کہنا تھا کہ پاکستان اپنی ہمسائیگی میں امن و استحکام چاہتا ہے، عالمی برادری کو 4 دہائیوں سے دی جانے والی پاکستان کی قربانیوں کا اعتراف کرنا چاہیئے۔ پاکستان عالمی برادری کے ساتھ کام اور تعاون جاری رکھے گا۔

یہ بھی پڑھیں: کابینہ کمیٹی برائے سی پیک کا اجلاس آج ہوگا

قومی سلامتی کمیٹی کا کہنا تھا کہ افغان مسئلے کا کبھی بھی کوئی فوجی حل نہیں تھا، پاکستان افغان مسئلے کے جامع سیاسی حل کے لیے پر عزم ہے۔

اعلامیے کے مطابق پاکستان افغانستان میں ایسا سیاسی حل چاہتا ہے جس میں تمام افغان دھڑے شامل ہوں، پاکستان افغانستان میں عدم مداخلت کے اصول پر سختی سے کاربند رہے گا، افغانستان میں اب تک تشدد کا کوئی بڑا واقعہ رونما نہیں ہوا۔

قومی سلامتی کمیٹی کے اجلاس میں پاکستانی سفارت خانے کی کوششوں کو سراہا گیا۔

متعلقہ خبریں