جی ٹی وی نیٹ ورک
پاکستان

ایشیائی ترقیاتی بینک کی رپورٹ نے پاکستان کیلئے خطرے کی گھنٹی بجادی

ایشیائی

اسلام آباد: زلزلے، سیلاب سے پاکستان میں ہر سال سوا 2 ارب ڈالرز کے نقصانات کا خدشہ، ایشیائی ترقیاتی بینک کی رپورٹ نے خطرے کی گھنٹی بجا دی۔

وسطی ایشیائی ممالک میں پاکستان قدرتی آفات سے سب سے زیادہ متاثر ہونے والا ملک قرار دیا گیا ہے۔

ایشیائی ترقیاتی بینک کی رپورٹ کے مطابق ایک ہزار سے زائد اموات بھی ہونے کا خدشہ ہے، صورتحال سے نمٹنے پاکستان کے پاس صرف ڈیڑھ سے 2 کروڑ ڈالر کی گنجائش ہے، پاکستان بھاری قرضوں اور مالی خسارے سے دوچار ہے۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ریاست میں صوبوں کے ہنگامی مالی وسائل کا کوئی تخمینہ ہی نہیں ہے، ملک میں سیلاب معاشی طور پر زلزلوں سے زیادہ تباہ کن ثابت ہو سکتے ہیں، سالانہ سیلاب سے سالانہ ایک ارب 60 کروڑ ڈالر کے نقصان کا خدشہ ہے۔

یہ بھی پڑھیں: مہنگائی،کرنٹ اکاؤنٹ و تجارتی خسارہ اور درآمدات کے اہداف حاصل نہ ہوسکے، اقتصادی رپورٹ

رپورٹ کے مطابق زلزلے کے باعث 64 کروڑ 40 لاکھ کا نقصان ہونے کا خدشہ ہے، زلزلوں سے سالانہ 863 افراد کے لقمہ اجل بننے کا خدشہ ہے، ایک لاکھ 65 ہزار سے زائد افراد زلزلے سے متاثر ہوسکتے ہیں۔

ایشیائی ترقیاتی بینک کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ سیلاب سے سالانہ 234 جاں بحق، 6 لاکھ 78 ہزار افراد کے متاثر ہونے کا خدشہ ہے، بلند قرضے اور مالی خسارے سے دوچار پاکستان کی 50 فیصد آبادی غربت کا شکار ہوجائے گی، زلزلے، سیلاب اور غربت کی وجہ سے سب سے زیادہ نقصان صوبہ سندھ کا ہوسکتا ہے۔

متعلقہ خبریں