جی ٹی وی نیٹ ورک
کھیل

اظہر علی کو زبردستی کپتان بنایا گیا تھا: شعیب اختر

شعیب

کراچی: سابق فاسٹ بولر شعیب اختر نے اظہر علی کو ٹیم کی قیادت چھوڑ کر بیٹنگ پر توجہ دینے کا مشورہ دیدیا اور کہا کہ اظہر کو زبردستی کپتان بنایا گیا تھا۔

پاکستانی ٹیسٹ کپتان اظہر علی کی بیٹنگ فارم گذشتہ 2 برس سے عدم تسلسل کا شکار ہے، گذشتہ برس اکتوبر میں سرفراز احمد کی جگہ ان پر قیادت کی ذمہ داری بھی ڈال دی گئی جس سے وہ مزید مشکلات کا شکار ہوگئے، اب انھیں ٹیسٹ کپتانی سے ہٹانے کی اطلاعات زیرگردش ہیں۔

اس صورتحال میں سابق فاسٹ بولر شعیب اختر نے اظہر علی کو قیادت چھوڑ کر صرف بیٹنگ پر ہی توجہ مرکوز کرنے کا مشورہ دیا ہے، ایک انٹرویو میں انھوں نے یہ بھی دعویٰ کیا کہ اظہر کو زبردستی کپتان بنایا گیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں: سابق فاسٹ باؤلر شعیب اختر کو ایف آئی اے نے طلب کرلیا

شعیب اختر نے کہا کہ اظہر شروع میں ٹیسٹ کپتان نہیں بننا چاہتے تھے مگر زبردستی انہیں اس پر مجبور کیا گیا، پی سی بی نے غیرضروری طور پر ان پر دباؤ بڑھایا اور اب تبدیل کیا جارہا ہے۔

راولپنڈی ایکسپریس نے کہا کہ میرا اظہر کو مشورہ ہے کہ وہ اپنے کھیل پر توجہ دیں اور اس بات کا اعلان کریں کہ کیا وہ ٹیم کی قیادت کرنا چاہتے بھی ہیں یا نہیں، اگر آپ کے سر پر معزولی کی تلوار لٹک رہی ہو تو ایسے میں کام کرنے کا کوئی فائدہ نہیں ہے۔

متعلقہ خبریں