جی ٹی وی نیٹ ورک
دنیا

کابل یونیورسٹی میں خواتین اساتذہ اور طالبات کے داخل ہونے پر پابندی

خواتین اساتذہ اور طالبات

کابل : دارالحکومت کی کابل یونیورسٹی میں خواتین اساتذہ اور طالبات کے داخل ہونے پر پابندی لگادی گئی۔

افغانستان کے دارالحکومت میں قائم کابل یونیورسٹی میں طالبان کی جانب سے مقرر کیئے گئے نئے ڈائریکٹر نے سماجی میڈیا کے ذریعے اعلان کیا ہے کہ جب تک تمام افراد کے لیے اسلامی ماحول میسر نہیں آتا اس وقت تک خواتین کو یونیورسٹی آنے یا کام کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی، اولین ترجیح اسلام ہے۔

یہ بھی پڑھیں : جب تک افغانستان میں جامع حکومت نہیں بنتی ترکی کابل ایئرپورٹ کا انتظام نہیں سنبھالے گا

ایک خاتون لیکچرار نے شناخت چھپا کر اپنے ردعمل میں کہا کہ اس مقدس جگہ پر کچھ غیر اسلامی نہیں ہوا۔ صدور، اساتذہ، انجینئرز اور یہاں تک کہ مذہبی شخصیات بھی جن کی یہاں تربیت ہوتی ہے یہ سب معاشرے کا حصہ ہیں، کابل یونیورسٹی افغان قوم کا گھر ہے۔ خیال رہے کہ اس پابندی میں خواتین اساتذہ اور طالبات شامل ہیں۔

متعلقہ خبریں