جی ٹی وی نیٹ ورک
کھیل

برطانوی کرکٹرز کا دورہ پاکستان ملتوی ہونے میں ملوث ہونے سے انکار

انگلینڈ

لندن: انگلینڈ کرکٹرز نے پاکستان کے دورے کے ملتوی ہونے کے پیچھے ہونے سے انکار کردیا ہے۔

برطانوی میڈیا کی ایک رپورٹ کے مطابق کسی بھی برطانوی کرکٹرز نے دورہ پاکستان کے حوالے سے اپنے خدشات ظاہر نہیں کیے اور نہ ہی ای سی بی کی جانب سے ان میں سے کسی سے پہلے کوئی مشورہ کیا گیا۔

رپورٹ کے مطابق کھلاڑیوں کا اصرار ہے کہ انہیں تو پوچھا بھی نہیں گیا کہ کیا وہ ٹریول کریں گے یا نہیں، کھلاڑیوں نے اس دعوی سے انکار کیا ہے کہ وہ ای سی بی کے فیصلے کے پیچھے تھے۔

یہ بھی پڑھیں: ویسٹ انڈین کرکٹ بورڈ کا دورہ پاکستان کے حوالے سے بیان سامنے آگیا

ٹیم انگلینڈ پلئیر پارٹنر شپ کے مطابق ای سی بی نے نیوزی لینڈ کا دورہ ختم ہونے کے بعد اندھیرے میں رکھا، ای سی بی کا اتوار کو اجلاس ہوا اور پھر کھلاڑیوں کو فیصلے کے بارے بتایا گیا، کرکٹرز کی یونین سے کسی موقع پر دورہ جاری رکھنے یا نہ رکھنے کے بارے نہیں پوچھا گیا۔

برطانوی میڈیا کا کہنا ہے کہ کسی موقع پر انگلینڈ کے کھلاڑیوں کو اعتماد میں نہیں لیا گیا، پلئیر یونین سمجھتی ہے کہ ای سی بی کے فیصلے سے کھلاڑیوں کا تنقید کا سامنا کرنا پڑا ہے۔

خیال رہے کہ نیوزی لینڈ کی ٹیم نے اچانک میچ سے ایک گھنٹے قبل سکیورٹی وجوہات کی بنا پر دورہ پاکستان ختم کرکے واپس جانے کا اعلان کردیا تھا جس کے بعد انگلینڈ نے بھی پاکستان کا دورہ نہ کرنے کا اعلان کیا تھا۔

ای سی بی کا کہنا تھا کہ انگلینڈ اور پاکستان کے درمیان 2 ٹی ٹوئنٹی میچز 13 اور 14 اکتوبرکو کھیلے جانے تھے لیکن اس صورتحال میں خطے کا دورہ کرنا پلیئرز کےلیے آئیڈیل نہیں۔

متعلقہ خبریں