جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

براڈ شیٹ منتخب وزیر اعظم کے خلاف مشرف کی سازش تھی : مریم اورنگزیب

براڈ شیٹ منتخب وزیر اعظم

اسلام آباد : عمران خان آپ 400 کروڑ روپے کس بنیاد اور قانون کے مطابق پیسے دے رہے ہیں؟ براڈ شیٹ دراصل منتخب وزیر اعظم کے خلاف مشرف کی سازش تھی۔

ترجمان مسلم لیگ (ن) مریم اورنگزیب نے اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ عمران صاحب آپ اپنی چوری، ایک آمر کی سازش کو اپنے این آر او کے لیے استعمال نہیں کرنے دیں گے۔ آپ کو صبح اٹھتے ہی ہزارہ شہدا یاد آتے ہیں، نہ ہی آپ کو آٹا، چینی چوری یاد آتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ براڈ شیٹ دراصل منتخب وزیر اعظم کے خلاف مشرف کی سازش تھی۔ مشرف نے نواز شریف کیخلاف ایک نجی کمپنی کو 6 سو کروڑ روپے اپنے مقاصد کے لئے دیئے۔ اس کا جواب کبھی نہیں آئے گا کیونکہ پاکستان کی تاریخ میں کبھی ان سوالوں کا جواب نہیں آتا۔

ان کا کہنا تھا کہ کمپنی بناکر سیاسی حریفوں کے خلاف کیسز بنائے گئے۔ ان لوگوں میں کچھ لوگ مشرف کابینہ میں شامل تھے، جنہیں اس فہرست سے نکالا گیا۔ اس وقت بھی نیب کے ذریعے کچھ نیب زادے اور کچھ نیب زدہ ہوئے۔

مریم اورنگزیب نے کہا کہ اس وقت دعویٰ کیا گیا کہ اربوں کھربوں روپے ریکور کئے گئے ہیں۔ براڈ شیٹ نے 400 کروڑ کا کلیم کیا، لیکن جھوٹ کی بنیاد پر مشرف وہ فیس نہیں دے سکا۔

اس کے بعد پیپلز پارٹی اور ن لیگ نے ایک پیسہ نہیں دیا کیونکہ یہ رپورٹ جھوٹ پر مبنی جعلی کمپنی کی ہے۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ اب شہزاد اکبر صاحب مذاکرات کررہے ہیں، مگر نیب اور براڈ شیٹ کے پاس کوئی قانونی جواز نہیں ہے۔ بتایا جائے جو ریکوری کی گئی وہ رقم کس اکاؤنٹ میں جمع کرائی گئی؟ عمران خان آپ 400 کروڑ روپے کس بنیاد اور قانون کے مطابق پیسے دے رہے ہیں؟ خود براڈ شیٹ کہتا ہے کہ شہزاد اکبر اور نیب کا رویہ انتہائی مایوس کن ہے۔

یہ بھی پڑھیں : براڈ شیٹ نے حکمران اشرافیہ کی کرپشن اور منی لانڈرنگ بے نقاب کردی : وزیر اعظم

لیگی رہنماء نے کہا کہ آج بھی ایک آمرانہ سوچ ملک پر مسلط ہے۔ آج بھی یہ کہا جارہا ہے اس جعل سازی کا 400 کروڑ روپے براڈ شیٹ کو دیا جائیگا، مگر واپسی کا کمیشن کیا ہوگا یہ طے کیا جارہا ہے۔ اب یہ مذاکرات کیسے ہوئے انہیں سامنے لانا چاہیئے، عوام حقائق جاننا چاہتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ عمران صاحب آپ کا، شہزاد اکبر اور مشرف کا منہ کالا براڈ شیٹ نے ہی کردیا ہے۔ اب حساب عمران خان آپ کو دینا ہوگا، نواز شریف سمیت شریف فیملی اپنا حساب دے چکی۔ آپ کو فارن فنڈنگ کیس کے حوالے سے حساب دینا ہوگا، جو نومبر 2014ء سے ابھی تک التوا کا شکار ہے۔

مریم اورنگزیب نے کہا کہ آپ نے قرضوں کی صورت میں چودہ ہزار روپے کی منی لانڈرنگ کی۔ آپ کو 400 ارب کے ڈاکے، علیمہ باجی کی سلائی مشینیں، پیزہ کمپنیاں، پچیس ملین ڈالر اور براڈ شیٹ اور پاکستان کی بے عزتی کا جواب دینا ہوگا۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ 22 سال سے یہ سازشیں عمران خان اور ایک آمر کی شکل میں جاری ہیں۔  مشرف اور عمران خان کی شکل میں ملک کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایا جارہا ہے۔ 72 سال سے ایک مافیا وزیراعظم کے دائیں اور بائیں بیٹھ کر ملک کو نقصان پہنچا رہا ہے۔

آپ کو تو چارج شیٹ جاری کرنی چاہیئے تھی اور تحقیقات مشرف کے خلاف شروع کرنی چاہیئے تھی۔ مشرف نے 600 کروڑ اور آپ نے 400 کروڑ براڈ شیٹ کے حوالے کردیا۔

انہوں نے کہا کہ اڑھائی سال سے نیب نیازی گٹھ جوڑ اور سیاسی انتقام پر جو پیسہ لگایا گیا اس کا جواب بھی دینا ہوگا۔ کیا ملک کا خزانہ آپ کا سرمایہ ہے؟ کیوں جہانگیر ترین کے خلاف کیس نہیں شروع ہوتا؟ 122 ارب سے ندیم بابر اور ادویات میں کیانی کی جیبیں بھر دی جاتی ہے۔

24 سال کی سیاسی جنگ کا راگ الاپنے والے کو 24 ماہ کی ناقص کارکردگی کا جواب دینا ہوگا۔

ان کا کہنا تھا کہ ہم آپ کے استعفے کا مطالبہ کرتے ہیں۔ آپ جائیں اور براڈ شیٹ کے ساتھ مذاکرات کرکے کاروبار کریں۔ ہمیں ملک چلانے دیں۔ پی ڈی ایم کی ڈائریکشن درست نہ ہوتی تو وزیراعظم کا ٹویٹ نہ آتا۔ اگر ہماری سمت درست نہ ہوتی تو عمران خان پر خوف طاری نہ ہوتا۔

متعلقہ خبریں