جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

آئی جی بدلنے کا فیصلہ کابینہ نے کہا ہے، عملدرآمد کرنا وزیر اعلیٰ کا کام ہے : مراد علی شاہ

عملدرآمد کرنا

کراچی : وزیر اعلیٰ سندھ نے پولیو مہم کا افتتاح کرنے کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ آئی جی کے حوالے سے کابینہ نے فیصلہ کیا ہے۔ اس فیصلے پر عملدرآمد کرنا وزیر اعلیٰ کا کام ہے۔

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے بلدیہ ٹاؤن میں پولیو کے قطرے پلا کر مہم کا افتتاح کیا۔ اس موقع پر ان کا کہنا تھا کہ بلدیہ کے علاقے سے گزشہ سال پولیو کے کیسز ظاہر ہوئے تھے۔ بلدیہ کے عوام میں آگاہی پیدا کرنے کیلئے پولیو مہم کا آغاز یہاں سے کیا جا رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پولیو ایک خطرناک اور اپاہج بنانے والا مرض ہے۔ ہمیں اس بیماری سے جان چھڑانی ہے۔ ہم پولیو ٹاس فورس کی کوششوں کو بھی سراہتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : سندھ میں ایک اور پولیو کیس کی تصدیق

مراد علی شاہ نے کہا کہ خیبر پختونخواہ میں ڈرامہ کیا گیا اور مہم کو ثبوتاژ کیا گیا۔ اکتوبر اور نومبر میں ایک قومی پولیو میٹنگ ہونی تھی، مگر ہمیں بلایا ہی نہیں گیا۔ ابھی ہم ہارے نہیں ہیں اس مصیبت سے ہم لڑ کر جان چھڑائیں گے۔

میڈیا کے سوالات کا جواب دیتے ہوئے وزیر اعلیٰ سندھ کا کہنا تھا کہ کتا مار مہم محکمہ بلدیات نے چلانی ہے۔ تین بڑے اسپتال این آئی سی ایچ، این آئی سی وی ڈی اور جے پی ایم سی ہم چلارہے ہیں۔ میں نے وفاقی حکومت کو آپشن دیئے ہیں آئیں آپ وہ اسپتال چلائیں۔

انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ نے حکم دیا ہے کہ سندھ حکومت نے ان اسپتالوں پر جو اخراجات کیئے ہیں، وہ دیئے جانے ہیں۔ وزیر اعظم نے کہا ہے کہ اسپتال سندھ حکومت چلائے۔ کیونکہ وزیر اعظم جانتے ہیں اسپتال چلانا کتنا مشکل کام ہے۔

ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ سپریم کورٹ کے حساب سے یہ اسپتال وفاق کی ملکیت ہے، لیکن سندھ حکومت نے ان اسپتال کا انتظام چلایا۔

مراد علی شاہ نے کہا کہ گورنر سندھ سے ملاقات ہوتی رہتی ہے۔ آئی جی کے حوالے سے کابینہ نے فیصلہ کیا ہے۔ اس فیصلے پر عملدرآمد کرنا وزیر اعلیٰ کا کام ہے۔

متعلقہ خبریں