جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ میں ایڈیشنل چیف سیکریٹری اور ایڈیشنل آئی جی کی تعیناتی چیلنج

ایڈیشنل چیف

لاہور : ہائیکورٹ میں جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ میں ایڈیشنل چیف سیکریٹری اور ایڈیشنل آئی جی کی تعیناتی کو چیلنج کر دیا گیا ہے۔

لاہور ہائیکورٹ میں جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ میں ایڈیشنل چیف سیکریٹری اور ایڈیشنل آئی جی کی تعیناتی کے خلاف درخواست جمع کرادی گئی ہے، جس میں وفاقی حکومت، گورنر پنجاب، چیف سیکرٹری پنجاب سمیت دیگر کو فریق بنایا گیا ہے۔

درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ پنجاب حکومت نے گورنر پنجاب کی منظوری کے بعد جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ میں زاہد اختر زمان کو ایڈیشنل چیف سیکریٹری اور انعام غنی کو ایڈیشنل آئی جی تعیناتی کا حکم جاری کیا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کا قیام ایک حقیقی تبدیلی ہے : وزیر اعلیٰ پنجاب

درخواست گزار کے مطابق حکومت کی جانب سے ابھی تک جنوبی پنجاب سیکریٹریٹ کیلئے علاقائی حدود کا تعین نہیں کیا گیا، صوبائی اسمبلی سے دو تہائی اکثریت سے منظوری کے بعد ہی ترمیمی بل صدر مملکت کو بھجوایا جا سکتا ہے۔

درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ آئین کے آرٹیکل 239 میں آئینی ترمیم کا طریقہ کار بتایا گیا ہے، جسے حکومت نے نہیں اپنایا۔ دونوں افسران کی تعیناتی کا نوٹیفکیشن آئین سے متصادم قرار دے کر کالعدم کیا جائے۔ درخواست کے حتمی فیصلے تک نوٹیفکیشن پر عمل درآمد روکا جائے۔

متعلقہ خبریں