جی ٹی وی نیٹ ورک
دنیا

برلن میں کرائے کے گھروں سے متعلق فیصلے کیخلاف شہری سڑکوں پر نکل آئے

کرائے کے گھروں

برلن : شہریوں نے کرائے کے گھروں سے متعلق عدالتی فیصلے کو مسترد کردیا اور شدید احتجاج کیا، اس دوران پولیس سے جھڑپیں بھی ہوئیں۔

جرمنی کی وفاقی عدالت کی جانب سے برلن کی صوبائی حکومت کے گھروں کے کرائے کی حد مقرر کے فیصلے کو منسوخ کرتے ہوئے فیصلہ دیا کہ صوبائی حکومتوں کو یہ اختیار حاصل نہیں کہ وہ کرائے محدود کرنے جیسے اقدامات کریں۔

یہ بھی پڑھیں : جرمنی کا کورونا پابندیوں میں مرحلہ وار نرمی کا اعلان

برلن کے شہریوں کو عدالتی فیصلہ پسند نہیں آیا، جس کے خلاف ہزاروں کی تعداد میں سڑکوں پر نکل آئے۔ مظاہرین شہر کے مشرقی علاقے کریوز برگ کے نیو کولین میں ہرمن پلاٹز کے پاس جمع ہوئے اور وہاں سے کوٹ بوسیر ٹور کی جانب مارچ کیا۔ مظاہرین کا مؤقف ہے کہ عدالتی فیصلے کے بعد مالک مکان کسی بھی وقت کرایہ بڑھاسکتے ہیں۔

واضح رہے کہ برلن میں گزشتہ برس فروری میں نافذ کیئے گئے قانون کے تحت تقریباً 90 فیصد عمارتوں کا کرایہ 5 برس کے لیے طے کردیا گیا تھا۔

متعلقہ خبریں