جی ٹی وی نیٹ ورک
پاکستان

کرونا وائرس کو قومی سلامتی کیلئے ممکنہ خطرہ قرار دیا جائے: رحمان ملک

رحمان ملک

اسلام آباد: سینیٹر رحمان ملک نے کرونا وائرس کے ممکنہ خطرے کے پیش نظر کمیٹی کا ہنگامی اجلاس کل طلب کرلیا، وزارت داخلہ کرونا وائرس کے ممکنہ پھیلاؤ کے روک تھام کیلئے لئے گئے اقدامات پر کل کمیٹی کو بریفنگ دے گی۔

چیئرمین قائمہ کمیٹی داخلہ سینیٹر رحمان ملک نے کرونا وائرس کی موجودگی و حفاظتی اقدامات پر بریفنگ طلب کرلی، وزارت داخلہ کرونا وائرس کے ممکنہ پھیلاؤ کے روک تھام کیلئے لئے گئے اقدامات پر کل کمیٹی کو بریفنگ دے گی۔

سینیٹر رحمان ملک نے کہا کہ کرونا وائرس کو قومی سلامتی کیلئے ممکنہ خطرہ قرار دیا جائے، حکومت تمام ائیرپورٹ، بندرگاہوں و دیگر داخلی مقامات پر ایمرجنسی کا نافذ کرے۔

رحمان ملک کا کہنا تھا کہ کرونا وائرس کے روک تھام کیلئے ایف آئی اے نے ایئرپورٹ، بندرگاہ و دیگر داخلہ مقامات پر کیا اقدامات اٹھائے ہیں، ملک بھر میں ائرپورٹ پر کرونا وائرس کے روک تھام کیخلاف کیا طبی سہولیات موجود ہیں، کرونا وائرس پھیلنے کی صورت میں حکومت نے فوری روک تھام کیلئے کیا منصوبہ بندی تیار کی ہے، کیا پاکستانی ہسپتالوں میں کرونا وائرس کے تشخیص کیلئے انتظامات و اہلیت موجود ہے۔

یہ بھی پڑھیں: حکومت کا پاکستانی طلبہ کو چین سے واپس نہ لانے کا فیصلہ ناقبل قبول ہے : رحمان ملک

سینیٹر رحمان ملک نے کہا کہ حکومت نے کرونا وائرس کے ٹیسٹ کیلئے کتنے کٹس برآمد کئے ہے؟ کیا ہر ہسپتال میں کرونا وائرس کے تشخیص و علاج کیلئے ادویات و دیگر ضروریات موجود ہیں؟

رحمان ملک نے کہا کہ آئی بی کمیٹی کو کرونا وائرس کے متعلق بیرون سے حاصل شدہ رپورٹس پر بریفنگ کرے، کم قیمت پر مناسب مقدار میں ملک بھر میںن ماسک تیار کی جائے۔

انہوں نے کہا کہ کیا وزارت صحت نے کرونا وائرس کے روک تھام کیلئے مشقیں کئے ہیں، ائیرپورٹ پر کام کرنے والے عملے کیلئے ماسک پہننا یونیفارم کا لازم حصہ قرار دینے کے احکامات جاری کرے۔

سینیٹر رحمان ملک نے کہا کہ چیف کمشنر ممکنہ کرونا وائرس پھیلنے کی صورت میں تیار شدہ پلان پر کمیٹی کو بریف کرے۔

متعلقہ خبریں