عدالت نے بلی کے قتل کے مقدمے کا فیصلہ سنادیا گیا

Court acquits woman driver in cat murder case in Karachi

کراچی: عدالت نے بلی کے قتل کے کیس کا فیصلہ سنادیا۔

رواں سال فروری میں ڈیفنس کے ایک شہری کی پالتو بلی ایک خاتون کی گاڑی کے نیچے آکر ہلاک ہوگئی تھی۔

جس کے بعد شہری نے مقدمے کے اندراج کیلئے سٹی کورٹ میں درخواست دائر کی تھی۔

مزید جانیئے: پالتو بلی کی ہلاکت کے اوپر مقدمہ درج

درخواست میں شہری کا کہنا تھا کہ واقعہ ڈیفنس فیز 8 درخشاں تھانے کی حدود میں یکم فروری کو پیش آیا جس پر عدالت نے خاتون کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم دیا تھا۔

اب اس مقدمے میں عدالت نے ناکافی شواہد کی بناء پر ملزمہ کو بری کردیا ہے۔

عدالت کا اپنے فیصلے میں کہنا تھا کہ ملزمہ اور مدعی دونوں ہی کی جائے وقوع پر موجودگی کے ثبوت نہیں لہٰذا کیس پر مزید کارروائی عدالتی وقت کا ضیاع ہے۔

عدالتی فیصلے میں کہا گیا کہ اس بات کا کوئی ثبوت نہیں ملا کہ خاتون نے بلی کو جان بوجھ کر ہلاک کیا، بلی کسی کی ملکیت نہیں تھی لہٰذا اس کی قیمت کا تعین بھی نہیں کیا جاسکتا۔

فیصلے کے مطابق بلی کی ہلاکت ایک پراسرار واقعہ ہے جس میں مدعی ہی کیس کا واحد گواہ ہے۔