جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

عدالت کا قتل اور اغوا کا جرم ثابت ہونے پر دو مجرموں کو پھانسی کا حکم

پھانسی کا حکم

کراچی : انسداد دہشت گردی کی عدالت نے قتل، اغوا برائے تاوان کا جرم ثابت ہونے پر دو مجرموں کو پھانسی کا حکم دے دیا۔

انسداد دہشت گردی کی عدالت نے قتل اور اغواء برائے تاوان کا جرم ثابت ہونے پر مجرم شیرازالدین فاروقی اور تصور عرف سہیل کو پھانسی دینے کا حکم دے دیا ہے۔

عدالت نے فیصلے میں کہا ہے کہ ثبوتوں اور شواہد کی روشنی میں ملزم پر جرم ثابت ہوتا ہے۔

تفتیشی افسر عتیق الرحمن کے مطابق مجرموں نے کیٹرنگ کمپنی کے ملازم عدیل رشید اور باسط کو پروگرام کے بہانے بلایا، عتیق الرحمن مجرموں نے دونوں کو اغوا کرکے رسوں سے باندھ دیا تھا۔ مجرموں نے دونوں افراد سے اے ٹی ایم کارڈ اور نقدی بھی چھین لی تھی۔

یہ بھی پڑھیں : قومی اسمبلی میں زیادتی کے مجرم کو چوک میں سرعام لٹکانے کی قرار داد کثرت رائے سے منظور

تفتیشی افسر کا مزید مطابق مجرموں نے دونوں افراد کے گھر والوں سے دس لاکھ روپے تاوان مانگا۔ تعاون کی رقم نا دینے پر دونوں افراد کو قتل کرکے لاشیں کنویں میں پھینک دیں۔ مجرموں کے خلاف 2010 میں تھانہ فیزوز آباد میں اغوا برائے تاوان اور قتل کا مقدمہ درج کیا گیا تھا۔

عدالت نے تفتیشی آفیسر عتیق الرحمان کے لئے بہترین تفتیش کرنے پر ڈپارٹمنٹ کو ایوارڈ دینے کا بھی حکم دیا ہے۔ عتیق الرحمن اینکر مرید عباس قتل کیس کے بھی تفتیشی افسر ہیں۔

متعلقہ خبریں