جی ٹی وی نیٹ ورک
پاکستان

سندھ پولیس میں ذہنی دباؤ میں رہنے والے افسران کی شناخت کا فیصلہ

ذہنی دباؤ میں رہنے

کراچی : سندھ پولیس نے ذہنی دباؤ میں رہنے والے افسران کی شناخت کا فیصلہ کرلیا۔

آئی جی سندھ مشتاق مہر کی جانب سے صوبے کے تمام ماتحت افسران کو لکھے گئے خط میں کہا ہے کہ محکمہ پولیس کی نوکری ذہنی دباؤ والا پیشہ ہے۔ مسلسل تناؤ سے افسران کی دماغی اور جسمانی صحت پر منفی اثر پڑتا ہے۔

خط کے مطابق افسر کی کارکردگی اور شہریوں سے رابطہ بھی متاثر ہوتا ہے۔ ایسی مثالیں موجود ہیں، جب شدید ذہنی دباؤ میں آکر پولیس افسران نے خود کشی کا انتہائی قدم اٹھایا۔ ماتحت افسران کی پیشہ ورانہ کارکردگی کو بہتر بنانے کے لئے سسٹم بنانے کی ضرورت ہے۔

یہ بھی پڑھیں : کراچی : اسٹیل ٹاؤن پولیس نے مقابلے کے بعد ایک ڈاکو کو زخمی حالت میں گرفتار کرلیا

خط میں کہا گیا کہ فیلڈ کمانڈرز مستقل بنیادوں پر طریقہ کار وضع کریں، جس سے ذہنی دباؤ میں رہنے والے افسران کی شناخت ہو سکے۔ ایسے افسران کا پتہ چلنے پر فوری قدم اٹھایا جائے۔ ذہنی دباؤ میں رہنے والے افسر کو میڈیکل بنیاد پر فوری چھٹی دی جائے۔ ایسے افسر کا ذہنی اور دماغی علاج بھی کروایا جائے۔

خط کی کاپی صوبے کے تمام ایڈیشنل آئی جیز، ڈی آئی جیز، اسسٹنٹ آئی جیز اور ایس ایس پیز کو ارسال کردی گئی ہے۔

متعلقہ خبریں