ملکی تاریخ میں ویڈیو لنک کے ذریعے پہلا فیصلہ

اسلام آباد: ملکی عدالتی تاریخ میں ویڈیو لنک کے ذریعے پہلے کیس کا فیصلہ سنادیا گیا، قتل کیس کے ملزم نور محمد کی گرفتاری سے قبل درخواست ضمانت منظور کرلی ہے۔

چیف جسٹس کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے پہلے کیس کا فیصلہ سنا دیا۔ عدالت نے قتل کیس کے ملزم نور محمد کی گرفتاری سے قبل درخواست ضمانت منظور کر لی۔ ہائیکورٹ حیدرآبادبینچ سے درخواست ضمانت پر فیصلہ تاخیر سے آنے پر حیرت کا اظہار کیا۔

سپریم کورٹ جوڈیشل کو معاملے کی تحقیقات اور دوہفتوں میں رپورٹ پیش کرنے سپریم جوڈیشل کائونسل کا حکم بھی دے دیا۔ جبکہ چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ درخواست ضمانت پر فیصلے پر تاخیر کیوں ہوئی؟ جبکہ ایڈووکیٹ سپریم کورٹ یوسف لغاری کا کہنا تھا کہ  میرے لئے اعزاز ہے اس سسٹم میں دلائیل کے لئے پہلے وکیل کے طور پر پیش ہوا۔ اس سسٹم سے سائیلین اور وکلا سب کو فائدہ ہوگا۔ یہ سسٹم ہائیکورٹ اور ان سرکٹ بینچ میں بھی شروع کیا جائے۔