جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

تمام مطالبات تسلیم، چاہتے ہیں اگلے الیکشن میں بھی اکٹھے جائیں : پرویز الٰہی

پرویز الٰہی

لاہور : حکومت نے مسلم لیگ (ق) کے تمام مطالبات تسلیم کرلیئے، پرویز الٰہی کا کہنا ہے کہ ہم چاہتے ہیں اگلے الیکشن میں بھی اکٹھے جائیں۔

پرویز الٰہی نے حکومتی کمیٹی سے ملاقات کے بعد صحافیوں سے گفتگو میں بتایا کہ حکومتی کمیٹی سے تمام معاملات پر گفتگو ہوئی ہے۔ حکومت کو درپیش چیلنجز کو مل کر مشاورت سے حل کریں گے۔ عمران خان کی قیادت، نیت اور کوشش پر کوئی شک نہیں۔

ق لیگ کے رہنماء نے کہا کہ ہم چاہتے ہیں کہ عمران خان کی تبدیلی کے ثمرات نچلی سطح تک جانے چاہیں۔ اس پر بھی بات ہوئی کہ بہتری کیوں نہیں آ رہی۔ ہم چاہتے ہیں اگلے الیکشن میں بھی اکٹھے جائیں۔

پرویز الٰہی نے صحافیوں کے سوالات کا جواب دیتے ہوئے کہ فضل الرحمان کی امانت میرے پاس ہے۔ امانت میں خیانت نہیں ہوتی۔ حکومت کے ساتھ مذاکرات کامیاب ہو گئے۔ مہنگائی سمیت ہر معاملے پر بات ہوئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ کچھ نئی چیزوں پر مشاورت ہوئی، جس کے بارے میں آئندہ چند روز میں بتائیں گے۔ دوسری وزارت لینے سے پہلے ہی انکار کر چکے ہیں۔

شہباز شریف آئندہ ماہ واپس آجائیں گے، مڈٹرم الیکشن ضروری ہیں : رانا ثناءاللہ

پرویز خٹک نے کہا کہ معمولی معاملات تھے، لیکن لوگوں نے سمجھا کہ ہم علیحدہ ہو گئے ہیں۔ یقین دہانی کرائی ہے کہ مل جل کر فیصلے ہوں گے۔ ایم کیو ایم سمیت کوئی اتحادی ہمیں چھوڑ کر نہیں جا رہا۔

ملاقات کی اندرونی خبروں سے متعلق ذرائع کا کہنا ہے کہ حکومتی کمیٹی نے ترقیاتی فنڈز، وزراء کے اختیارات سمیت تمام مطالبات تسلیم کرلیئے ہیں، اس سلسلے میں آئندہ چند روز میں اہم ملاقات ہوں گی۔

ذرائع کے مطابق مسلم لیگ (ق) کے وزراء اپنی وزارتوں اور اپنے متعلقہ اضلاع میں عوامی مسائل کے حل کے معاملات میں بااختیار ہوں گے، قابل اعتراض تقرری پر تحریک انصاف اعتراض کرسکے گی، جس پر مسلم لیگ (ق) نیا نام دینے کی پابند ہوگی۔

ذرائع نے یہ بھی بتایا کہ وفاق کے معاملات پر پرویز خٹک اور اسد عمر عمل کروائیں گے، جب کہ پنجاب کے معاملات پر وزیر اعلیٰ اور گورنر عمل درآمد کروانے کے پابند ہوں گے۔

متعلقہ خبریں