جی ٹی وی نیٹ ورک
پاکستان

حکومت کا پی ٹی آئی کیخلاف ڈکلیئریشن سپریم کورٹ بھیجنے کا فیصلہ

حکومت

اسلام آباد: مریم اورنگزیب کا کہنا ہے کہ کابینہ کے آئندہ اجلاس میں وزارت قانون ڈکلیئریشن پیش کرے گی، حکومت پی ٹی آئی کیخلاف پولیٹیکل پارٹیز آرڈر 2002کے تحت کارروائی کی پابند ہے۔

وفاقی وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب کا پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہنا تھا کہ ہیلی کاپٹر حادثے میں افواج پاکستان کے افسران و اہلکار شہید ہوئے، شہدا سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں امدادی سرگرمیاں انجام دے رہے تھے، وزحکومت نے این ڈی ایم اے او رپی ڈی ایم اے کی رپورٹس کا جائزہ لیا، وزیراعظم نے آج بھی سیلاب سے متاثرہ افراد کی فوری امداد کی ہدایت کی ہے۔

مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن کے فیصلے پر تفصیلی بات ہوئی، غیر ملکی فنڈنگ کیس کا 8 سال بعد تفصیلی فیصلہ آیا ہے، الیکشن کمیشن کا فیصلہ پی پی او 2002 اور الیکشن ایکٹ 2017 کے مطابق آیا، پی ٹی آئی نے کوئی جواب نہیں دیا، اسٹیٹ بینک نے تمام ریکارڈ فراہم کیا، پی ٹی آئی کے خلاف ڈکلیئریشن سپریم کورٹ بھیجنے کا اصولی فیصلہ کرلیا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: پی ٹی آئی کو الیکشن کمشنر کے بجائے عمران خان سے استعفیٰ مانگنا چاہیئے: مریم نواز

ان کا کہنا تھا کہ کابینہ کے آئندہ اجلاس میں وزارت قانون ڈکلیئریشن پیش کرے گی، حکومت پی ٹی آئی کیخلاف پولیٹیکل پارٹیز آرڈر 2002کے تحت کارروائی کی پابند ہے، غیر ملکی فنڈنگ کیس کی تحقیقات ایف آئی اے کرے گا، ایف آئی اے کو فوری طور پر انکوائری شروع کرنے کی ہدایت کردی گئی، اسٹیٹ بینک، ایف بی آر سمیت تمام ادارے فیصلے کی روشنی میں انکوائری کریں گے، پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار کسی جماعت کو فارن فنڈڈ پارٹی ڈکلیئر کیا گیا ہے۔

متعلقہ خبریں