جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

براڈشیٹ میں عمران خان نے نیب کو اپنا فرنٹ مین بنایا، تمام ریکارڈ پبلک کیا جائے

براڈشیٹ میں

اسلام آباد: مریم اورنگزیب کا کہنا ہے کہ براڈشیٹ میں عمران خان نے نیب کو اپنا فرنٹ مین بنایا، براڈشیٹ کا تمام ریکارڈ پبلک کیا جائے، توشہ خانہ کیس میں ریفرنس دائر کیا جائے۔

ترجمان ن لیگ مریم اورنگزیب کا میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ نیب کی جانب سے پریس ریلیز جاری ہوئی ہے، اصل میں یہ پریس ریلیز نہیں بلکہ نیب نیازی گٹھ جوڑ ہے، یہ نیب لاہور نہیں وزیراعظم ہاؤس کی پریس ریلیز ہے، چیئرمین نیب ان کی غلامی کررہے ہیں، نیب لاہور نے کہا ہم نے 578ارب روپے کی ریکوری کی، ن لیگ کا مطالبہ ہے بتایا جائے ریکوری پر کتنے پیسے خرچ ہوئے، ن لیگ کا مطالبہ ہے 578 ارب کی ریکوری کو پبلک کیا جائے۔

مریم اورنگزیب نے الزام لگاتے ہوئے کہا کہ پریس ریلیز عمران خان کے حکم پر جاری کی گئی، نوازشریف کی جائیداد کی ریکوری کی جارہی ہے، ن لیگ کے دور میں اسپتال ، اسکول اور بجلی کے منصوبے لگائے گئے، اپوزیشن کیخلاف بے بنیاد الزامات کا سلسلہ جاری ہے، 3 سال میں دھیلے کی کرپشن ثابت نہیں کرسکے۔

یہ بھی پڑھیں: چھوٹی چھوٹی باتیں ہوتی ہیں، کل ن، ش اور م میرے دائیں بائیں موجود تھے : رانا ثناءاللہ

ان کا کہنا تھا کہ نواز شریف نے ملک کو ایٹمی قوت بنایا، موٹرویز بنائیں، پریس ریلیز کا مقصد چیئرمین نیب کی ایکسٹینشن کی درخواست ہے، ہمیں بلیک میل کرکے چیئرمین نیب کو ایکسٹینشن نہیں دی جاسکتی،

آٹے کی 450 ارب کی چوری پر پریس ریلیز کیوں نہیں جاری ہوتی، عدالت موجود ہے، پریس ریلیز کے تماشے بند ہونے چاہئیں۔

انہوں نے کہا کہ بنی گالہ کے غیرقانونی محل کو قانونی کرایا گیا، پریس ریلیز نہیں آتی، ایل این جی کی 400ارب روپے کی چوری نیب کو نظر نہیں آتی، چینی چوری، بلین ٹری سونامی، فارن فنڈنگ پر پریس ریلیز جاری کی جائے، براڈشیٹ میں عمران خان نے نیب کو اپنا فرنٹ مین بنایا، براڈشیٹ کا تمام ریکارڈ پبلک کیا جائے، توشہ خانہ کیس میں ریفرنس دائر کیا جائے۔

ترجمان ن لیگ مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ روٹی، ادویات، آٹا، بجلی، گیس چھیننے والوں کا عوام گریبان پکڑیں گے، کبھی ای وی ایم، کبھی میڈیا ڈیویلپمنٹ اتھارٹی کا تماشا لگایا جاتا ہے، دھمکی، غنڈا گردی سے ریفارمز نہیں ہوتیں ان کا مقصد دھاندلی ہے، الیکشن، بجلی، آٹا چور ملک پر مسلط ہے، نااہل حکومت کے دن تھوڑے رہ گئے ہیں، نیب کو سیاسی انتقام کے لیے استعمال کیا جارہا ہے۔

متعلقہ خبریں