غلط استعمال کے باعث ٹک ٹاک ایپلیکیشن پر پابندی

کراچی: ٹک ٹاک ایک ایسی ایپلیکیشن بنائی گئی تھی جس میں اپنی چھوٹی چھوٹی وڈیوز ڈبنگ کر کے بنا سکتے تھے۔ لیکن کچھ ممالک میں اس کے غلط استعمال کے باعث ٹک ٹاک ایپلیکیشن پر پابندی لگا دی گئی۔

انڈیا میں بھی ٹک ٹاک ایپلیکشن  پر پابندی لگانے کے لئے مرکزی حکومت نے سپریم کورٹ سے رجوع کیا تھا جس پر عدالتی حکومت نے اس ایپلیکیشن کو ہٹانے کا  فیصلہ جاری کیا ۔ جس کے بعد اینڈرائڈ اور آئی او ایس کی جانب  نے اس ایپلیکیشن کو ہی پلے اسٹور سے ہٹا دیا۔

ٹک ٹاک پر غیر اخلاقی اور غیر مہذبی ویڈیوز کی پیش کش سے نوجوان نسل میں غیر اخلاقی سرگرمیوں کو فروغ مل رہا ہے۔

جبکہ انڈونیشیا اور بنگلہ دیش میں پہلے ہی ٹک ٹاک پر پابندی ہے اور امریکہ نے چلڈرن آن لائن پرائیویسی ایکٹ منظور کرلیا ہے۔