بھارت نے خالصتان نواز تنظیم ’’سکھس فار جسٹس‘‘ کو کالعدم قرار دیدیا

نیو دہلی : بھارتی سرکار نے خالصتان تحریک کی حمایتی تنظیم پر پابندی لگا دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق بھارت نے خالصتان نواز گروپ ’’دی سکھس فار جسٹس‘‘پر ریاست مخالف سرگرمیوں کا الزام عائد کرتے ہوئے پابندی عائد کردی۔

امریکا میں تنظیم ”دی سکھس فار جسٹس” اپنے علیحدگی پسند ایجنڈے کے تحت سکھ ریفرنڈم 2020ء کا مطالبہ کرتی ہے۔

بھارتی وزارت داخلہ کی جانب سے جاری کردہ بیان کے مطابق کابینہ کے اجلاس میں اس تنظیم کو غیر قانونی سرگرمیوں کا ا لزام عائد کرتے ہوئے کالعدم قرار دیا گیا ہے۔

بھارت کے اس اقدام سے امریکا، کینیڈا، برطانیہ وغیرہ میں مقیم سکھوں کی جانب سے چلائی جانے والی اس تنظیم کو زبردست دھچکا لگا ہے۔