جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

بھارتی فوج کا جعلی مقابلوں میں کشمیریوں کے قتل کا اعتراف، مقدمہ درج

کے قتل

اسلام آباد : بھارت کی ذلت اور رسوائی پر مبنی ایک اور رپورٹ سامنے آگئی ہے۔ جعلی سرجیکل اسٹرئیکس، 2019 میں جھوٹے دعوؤں اور ای یو ڈس انفو لیب رپورٹ کے بعد جعلی مقابلوں اور ماروائے عدالت قتل کا اعتراف کرلیا گیا۔ مقبوضہ کشمیر میں جعلی مقابلوں کا پول کھل گیا۔

مقبوضہ کشمیر پولیس کی رپورٹ نے قابض فوج کے ہتھکنڈوں کو بے نقاب کر دیا۔ بھارتی فوج نے جعلی مقابلے میں شہریوں کی ہلاکتوں کا اعتراف کیا، جس کے بعد بھارتی کیپٹن بھوپیندر سنگھ اور اس کے 2 سویلین ساتھیوں کیخلاف قتل کا مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : بھارتی فوج نے مشہور کشمیری فٹبالر عامر سراج کو شہید کر دیا

شناختی دستاویزات سے محروم کر کے مزدوروں کی لاشوں کیساتھ غیرقانونی ہتھیار باندھے گئے۔ کیپٹن بھوپیندر سنگھ نے کشمیری مزدوروں کو قتل کر کے انہیں حریت پسند قرار دیا۔ امیش پوراہ میں جعلی مقابلے کے بعد تینوں مزدوروں کو فوراً دفنا دیا گیا۔ ایک ماہ بعد راجوڑی میں اہلخانہ نے سوشل میڈیا پر تصاویر سے بیگناہ مزدوروں کو شناخت کر لیا۔

اہلخانہ نے بیان دیا کہ تینوں سیب کے باغات میں مزدوری کے لئے گئے تھے، عوامی احتجاج کے بعد ستمبر میں قبر کشائی کے بعد ڈی این اے ٹیسٹ کئے گئے۔ مقبوضہ کشمیر میں نافذ کالے قانون کے تحت ملوث فوجیوں کیخلاف سول عدالت میں کارروائی نہیں ہو سکتی۔

مقبوضہ کشمیر میں ماضی میں بھی سینکڑوں کشمیریوں کو جعلی مقابلے میں شہید کیا جا چکا ہے۔ جعلی مقابلے، ماورائے عدالت ہلاکتیں اور غیر قانونی حراستیں قابض بھارتی فوج کا وطیرہ بن چکی ہیں۔

متعلقہ خبریں