جی ٹی وی نیٹ ورک
دنیا

القاعدہ کی پناہ گاہ سے متعلق امریکی بیان خطرناک جھوٹ ہے، ایران

امریکی بیان

تہران: ایران کے وزیر خارجہ جواد طریف نے اپنے امریکی ہم منصب مائیک پومپیو کے بیان کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ ہم القاعدہ اور داعش کا نشانہ رہے ہیں اور ہم نے ان کا ڈٹ کر مقابلہ کیا ہے۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق ایرن کے وزیر خارجہ جواد ظریف نے کہا ہے کہ ہم نے القاعدہ جیسی دہشت گرد جماعتوں کے خلاف جنگ کی ہے اور ہم ان کے تشدد کا شکار بھی رہے ہیں اس لیے ایران کو القاعدہ کا گڑھ کہنا مائیک پومپیو کا ایک “خطرناک جھوٹ” ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنی ٹویٹ میں جواد ظریف نے لکھا کہ ایران سے متعلق فرضی کہانیاں بنانے اور القاعدہ سے تعلق جوڑنے جیسے سفید جھوٹ سے مائیک پومپیو اپنی وزارت کے گنے چنے دنوں کا افسوناک خاتمہ کر رہے ہیں۔

ایران القاعدہ کی نئی پناہ گاہ اور مرکز بن چکا ہے، امریکی سیکریٹری خارجہ

ایرانی وزیر خارجہ نے مزید کہا کہ بے پر کی کہانیوں سے کسی کو بے وقوف نہیں بنایا جاسکتا، نائن الیون کے تمام حملہ آور ایران سے نہیں بلکہ مائیک پومپیو کی پسندیدہ جگہ سے آئے تھے۔

واضح رہے کہ امریکی وزیر خارجہ مائک پومپیو نے الزام عائد کیا تھا کہ ایران دہشت گرد تنظیم القاعدہ کا نیا گڑھ ہے اور حال ہی میں القاعدہ نے ایران میں ایک نیا ہوم بیس قائم کیا ہے جس سے نمٹنے کے لیے امریکا کے پاس آپشنز ہیں۔

متعلقہ خبریں