جی ٹی وی نیٹ ورک
دنیا

ایران کے صدارتی انتخابات، آیت اللہ ابراہیم رئیسی کا پڑلہ بھاری، فیصلہ کل ہوگا

آیت اللہ ابراہیم

تہران : ایران میں صدارتی انتخابات کل منعقد ہوں گے، سات امیدواروں میں سے تین انتخابات سے دستبردار ہوچکے ہیں، تمام امیدواروں پر آیت اللہ ابراہیم رئیسی کا پڑلہ بھاری ہے۔

ایران میں کل ہونے والے انتخابات میں ایرانی عدلیہ کے سابق سربراہ آیت اللہ ابراہیم رئیسی، سابق گورنر اسٹیٹ بینک عبدالناصر ہمتی، محسن رضائی اور موجودہ ڈپٹی اسپیکر امیر حسین قاضی زادہ کے درمیان مقابلہ ہو گا۔

ایرانی میڈیا کے مطابق آیت اللہ ابراہیم رئیسی کو مقبولیت میں دیگر امیدواروں کے مقابلے میں برتری حاصل ہے۔ رواں برس ہونے والے انتخابی سروے میں ابراہیم رئیسی کو 57 اشاریہ 3 فیصد عوام نے اپنی پسند قرار دیا۔

یہ بھی پڑھیں : ایران، کورونا ویکسین تیار کرنے والا چھٹا ملک بن گیا

ایرانی انتخابات پر نظر رکھنے والے تجزیہ کاروں میں آیت اللہ ابراہیم رئیسی کو امریکہ کے خلاف سخت مؤقف رکھنے والا سمجھا جاتا ہے، جس کے باعث امریکہ ایران تعلقات میں بہتری کے خواہاں قوتوں کو ناامیدی کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے۔

دوسری جانب تجزیہ کاروں کا یہ بھی کہنا ہے کہ آیت اللہ رئیسی پاکستان کی جانب نرم گوشہ رکھتے ہیں اور اگر ان کی کامیابی ہوئی تو پاک ایران تعلقات میں مزید بہتری دیکھی جا سکے گی۔

ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای نے عوام پر زور دیا ہے کہ وہ ہر صورت اپنی رائے کا اظہار کریں۔

13ویں صدارتی انتخابات میں رجسٹر ووٹرز کی تعداد 5 کروڑ 93 لاکھ ہے۔ ایرانی عوام کل صبح 8 بجے سے رات 12 بجے تک اپنے ووٹ کاسٹ کریں گے۔

متعلقہ خبریں