جی ٹی وی نیٹ ورک
پاکستان

آئی جی سندھ پولیس سمیت دیگر اہم افسران کو بلاوجہ ٹارگٹ کیا جارہا ہے : ناصر شاہ

آئی جی سندھ پولیس

‎کراچی : ناصر شاہ کا کہنا ہے کہ امن و امان کی صورتحال خراب ہوئی تو ذمہ دار وفاقی حکومت ہوگی، آئی جی سندھ پولیس سمیت اہم افسران کو بلاوجہ ٹارگٹ کیا جارہا ہے۔

صوبائی وزیر ناصر حسین شاہ نے جاری بیان میں کہا ہے کہ وفاقی حکومت سیاسی ناکامیوں کے بعد اوچھے ہتھکنڈوں پر اتر آئی ہے۔ سندھ پولیس سے اہم اور قابل پولیس افسران کے تبادلے ان کی بوکھلاہٹ کا نتیجہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ اگر سندھ میں امن و امان کی صورتحال خراب ہوئی تو ذمہ دار وفاقی حکومت ہوگی۔ یہ چاہتے ہیں کہ پنجاب اور کے پی کی طرح سندھ پولیس بھی ان کی غلامی کرے۔ وفاق صوبوں کو مضبوط کرتا ہے یہ عجیب و ذہنی غریب حکمران ہیں، جو کمزور کر رہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : پولیس سندھ حکومت کی غلام بن چکی، آئی جی سندھ سے حساب لیا جائے گا : حلیم عادل شیخ

ان کا کہنا تھا کہ آئی جی سندھ پولیس سمیت اہم افسران کو بلاوجہ ٹارگٹ کیا جارہا ہے۔ آئی جی تبادلہ نہ ہوسکا تو اب کئی اہم افسران کا بلاوجہ تبادلہ کیا گیا۔ پولیس کے بہتر افسران ان سے برداشت نہیں ہوتے۔ صوبائی حکومت ان تمام پولیس افسران کے ساتھ کھڑی ہے، جو اپنے فرض کی ادائیگی ایمانداری سے کرتے ہیں۔

ناصر حسین شاہ نے کہا کہ گورنر سندھ کی آئی جی سندھ کے خلاف پریس کانفرنس سے واضع ہوگیا کہ پی ٹی آئی کیا چاہتی ہے۔ یہ چاہتے ہیں کہ ان کے قبضہ گروپ قانون شکنی بھی کریں اور ان سے پوچھا تک نہ جائے۔

متعلقہ خبریں