ماحولیاتی آلودگی کے خلاف لاہور ہائی کورٹ بڑا فیصلہ، گھروں میں درخت لگانا لازمی قرار

لاہور: لاہور ہائی کورٹ نے ماحول سے متعلق تاریخی فیصلہ سناتے ہوئے نئی بننے والی ہاؤسنگ سوسائٹیز میں گھروں کی تعمیر پر 2 درخت لازمی لگانے کا حکم دے دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ میں درخواست دائر کی گئی تھی کہ فیصل آباد اور گوجرانوالہ آلودہ ترین شہر ہیں، فیکٹریوں کے باعث آلودگی میں اضافہ ہوا، دھواں اسموگ کا سبب بن رہا ہے، شہریوں میں بیماری کی شرح میں تشویشناک اضافہ ہوا ہے، عدالت ماحولیاتی آلودگی کے خاتمے کے لئے اقدامات کی ہدایت کرے۔

جسٹس جواد الحسن نے فیصلہ سناتے ہوئے حکم دیا کہ نئی ہاؤسنگ سوسائٹیز گھر کی تعمیر پر 2 درخت لگانے کی پابند ہوں گی، درخت نہ لگانے والی سوسائٹیز کے لائسنس منسوخ کردیئے جائیں گے۔