جی ٹی وی نیٹ ورک
دنیا

لبنانی عوام کا احتجاج جاری، پولیس کے ساتھ جھڑپیں، سرکاری عمارتوں پر حملے

لبنانی عوام

بیروت : لبنانی عوام نے ایک اور رات سڑکوں پر گزاری، رات بھر پولیس کے ساتھ جھڑپیں جاری رہیں، دو وزیروں نے اپنے عہدوں سے استعفیٰ دے دیا۔

لبنانی عوام میں بیروت میں ہونے والے سانحے کا غم اب تازہ ہے، مظاہرین کی جانب سے وزارت ہاؤسنگ اور ٹرانسپورٹ کی عمارتوں پر حملے کئے گئے اور رات بھر پولیس کے ساتھ جھڑپیں جاری رہیں۔

دوسری جانب لبنان کی وزیر اطلاعات منال عبد الصمد اور پارلیمنٹ کے چھ ارکان نے بیروت دھماکے میں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع اور شدید مالی نقصان پر عوام سے معذرت کرتے ہوئے اپنے استعفے صدر میشال نعیم عون کو پیش کردیئے ہیں۔

لبنان کے وزیراعظم حسان دیاب کا کہنا ہے کہ صدر میشال عون کو قبل از وقت انتخابات کی تجویز دے چکے ہیں۔

لبنان کے لئے امدادی ٹیلی کانفرنس میں مختلف ملکوں نے تین سو ملین ڈالر امداد دینے کا اعلان کیا ہے، یہ امدادی رقم براہ راست عوام کو دی جائے گی۔

متعلقہ خبریں