مقبوضہ کشمیر :4 ماہ کے دوران 38 افراد شہید، 853 افراد زخمی اور 39 خواتین سے زیادتی

مقبوضہ کشمیر 4 ماہ

سری نگر : مقبوضہ کشمیر میں قابض فوج کا کرفیو اور لاک ڈاون ایک سو اکیس روز سے جاری ہے۔ بھارتی سفاک فوج نے گزشتہ 4 ماہ کے دوران 38 افراد کو شہید، 39 خواتین سے زیادتی اور 853 افراد کو زخمی کیا۔

مقبوضہ کشمیر میں فوجی محاصرے اور انٹرنیٹ کی معطلی کو چار ماہ مکمل ہو گئے ہیں۔ ایک سو اکیس دنوں سے جاری غیر یقینی صورتحال میں مزید اضافہ ہونے لگا ہے۔

کشمیر میڈیا سروس نے بھارتی فوج کے 4 ماہ کے مظالم اور کریک ڈاؤن پر رپورٹ جاری کردی ہے۔

یہ بھی پڑھیں : جماعت اسلامی کا 22 دسمبر کو اسلام آباد میں کشمیر مارچ کا اعلان

رپورٹ کے مطابق وادی میں 4 ماہ کے کرفیو کے دوران 38 افراد شہید ہوئے، جن میں 2 خواتین اور 3 بچے بھی شامل ہیں۔ پُرامن مظاہرین پر فائرنگ، پیلٹس اور آنسو گیس کی شیلنگ سے 853 افراد شدید زخمی ہوئے۔

کرفیو کے دوران حریت رہنماؤں سمیت 11 ہزار چار سو ایک نوجوانوں کو گرفتار یا نظر بند کیا گیا۔ قابض فوج نے گھروں میں گھس کر 39 کشمیری خواتین کی آبروریزی بھی کی۔

کشمیر میڈیا سروس : https://kmsnews.org/news/2019/12/03/ppfm-condemns-killings-lockdown-in-iok/

وادی چنار میں دفعہ 144 نافذ ہونے سے کاروباری، تجارتی مراکز اور تعلیمی ادارے بند ہیں اور انٹرنیٹ کی بندش سے لوگوں باہر کی دنیا سے کٹے ہوئے ہیں۔