جی ٹی وی نیٹ ورک
پاکستان

اسٹیٹ بینک کا 2 ماہ کے لیے مانیٹری پالیسی کا اعلان، شرح سود میں ایک فیصد کی کمی

سود میں ایک فیصد

مہنگائی اور معاشی سست رفتاری کے باعث شرح سود میں کمی آگئی۔ اسٹیٹ بینک نے مانیٹری پالیسی کا اعلان کرتے ہوئے شرح سود ایک فیصد سے گھٹا کر سات فیصد کردی۔

شرح سود دو سال کی کم ترین سطح پر آگئی۔ مارچ سے اب تک شرح سود میں چھ اشاریہ پچیس فیصد کی کمی کی گئی، جس سے حکومتی قرضوں میں دو ہزار ایک سو ارب روپے کی کمی ہوئی۔

مارچ کے وسط سے اب تک شرح سود میں 625 بیسس پوائنٹس کی کمی آچکی ہے۔ شرح سود میں کمی کے فوائد گھرانوں اور کاروباری اداروں کو بروقت منتقل کیے جاسکیں گے۔

یہ بھی پڑھیں : عالمی مالیاتی اداروں سے مرکزی بینک کو ایک ارب ڈالر موصول

اسٹیٹ بینک کے مطابق عالمی وباء پاکستان سمیت بہت سی ابھرتی ہوئی منڈیوں میں پھیلتی جارہی ہے، جب کہ کئی ممالک میں دوسری لہر آنے کے خطرات ہیں۔

اسٹیٹ بینک کی جانب سے جاری اعلامیہ میں کہا گیا کہ مہنگائی میں کمی کا سبب ڈیزل اور پیٹرول کی قیمتوں میں حالیہ کمی ہے، جب کہ اوسط مہنگائی اگلے مالی سال کے لیے پہلے اعلان کردہ حدود 7-9 فیصد سے کم رہ سکتی ہے۔

متعلقہ خبریں