جی ٹی وی نیٹ ورک
اہم خبریں

نواز شریف نے دباؤ مسترد کرکے پاکستان کو اسلامی دنیا کی پہلی ایٹمی قوت بنایا : وزیر اعظم

نواز شریف نے دباؤ

اسلام آباد : شہباز شریف کا کہنا ہے کہ نواز شریف نے ہر لالچ، ہر دباؤ مسترد کرکے پاکستان کو دنیا کی ساتویں اور اسلامی دنیا کی پہلی ایٹمی قوت بنایا۔

وزیراعظم شہباز شریف نے پاکستان کے جوہری دھماکوں کی سلور جوبلی پر قوم کو مبارک دیتے ہوئے کہا کہ 28 مئی 1998 کوبلوچستان، چاغی کے پہاڑوں میں بلند ہونے والے نعرہ تکبیر گونج آج بھی جاری ہے۔ دفاع پاکستان کا یہ تمغہ بلوچستان کی دھرتی کے سینے پر سجا ہے۔

انہوں نے کہا کہ یہ پاکستان کا اپنی آزادی، خودمختاری اور دفاع پر سمجھوتہ نہ کرنے کے واضح اظہار کا تاریخی دن ہے۔ پاکستان کے جوہری پروگرام کے معمار شہید ذوالفقار علی بھٹو اور پاکستان کا سرفخر سے بلند کرنے والے عظیم محب وطن وزیراعظم نوازشریف کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ نواز شریف نے ہر لالچ، ہر دباؤ مسترد کرکے پاکستان کو دنیا کی ساتویں اور اسلامی دنیا کی پہلی ایٹمی قوت بنایا۔ ذوالفقار علی بھٹو سے وزیراعظم نوازشریف تک تمام حکومتوں اور جوہری پروگرام سے متعلق تمام ذمہ داروں کو قوم سلام پیش کرتی ہے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ ہمارے سائنسدان، انجینئرز اور جوہری پروگرام کو پروان چڑھانے والا ہر فرد لائق تحسین ہے، یہ قوم کے ہیروز ہیں۔ ہماری مسلح افواج نے جوہری پروگرام کے لئے جو خدمات انجام دی ہیں وہ تاریخ کا سنہری باب ہے۔

یہ بھی پڑھیں : 24 سال قبل خطے میں طاقت کا توازن بحال ہوا : پاک فوج

شہباز شریف کا کہنا تھا کہ پاکستان اٹامک انرجی کمیشن اور محسن پاکستان ڈاکٹر عبدالقدیر خان کو خراج عقیدت پیش کرتے ہیں۔ ہم اپنے اِن تمام محسنوں کو بھول نہیں سکتے، جنہوں نے قوم کے مفاد کے لئے عظیم قربانیاں دی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ہم سعودی عرب سمیت اپنے برادر اور عظیم دوست ممالک کا شکریہ ادا کرتے ہیں جنہوں نے معاشی پابندیوں میں پاکستان کا ساتھ دیا۔ آج کا دن پاکستان کے اتحاد، یک جہتی اور ایک ہونے کا دن ہے، یہی اتحاد پاکستان کی اصل قوت ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ قوم کے اتحاد، محنت اور یقین کامل سے اب پاکستان کو معاشی قوت بنانا ہے۔ ہمیں بحیثیت قوم آج معاشی خودمختاری اور خودانحصاری کے لئے یوم تکبیر والے جذبے سے آگے بڑھنا ہوگا۔

وزیر اعظم نے کہا کہ آج یوم تجدید عہد کا دن ہے کہ پاکستان کے دفاع، سلامتی اور قومی مفادات کے لئے کسی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے۔ یوم تکبیر پر دس روزہ تقریبات کو قوم کے اتحاد اور پاکستان کی تعمیر، ترقی اور خوش حالی کے عزم کے ساتھ منایا جائے۔

متعلقہ خبریں