جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

انیس ایڈووکیٹ پر لڑکوں کو عسکری تربیت کیلئے بیرون ملک بھیجنے کا الزام

انیس ایڈووکیٹ

کراچی : ڈی آئی جی سی ٹی ڈی کا کہنا ہے کہ انیس ایڈووکیٹ سے متعلق اہم ثبوت ملا ہے، ان کے پاس لڑکوں کو عسکری تربیت کیلئے بیرون ملک بھیجنے کا ٹاسک تھا۔

ڈی آئی جی سی ٹی ڈی عمر شاہد حامد نے پریس کانفرنس میں بتایا کہ ایم کیو ایم لندن گروپ کے کچھ گرفتار ہونے والے ملزمان نے کچھ ایم کیوایم لیڈرز کے نام بھی بتائے تھے۔ سی ٹی ڈی میر پور خاص نے اس تناظر میں اہم کارروائی کی ہے، جس میں اسلحہ بھاری مقدار میں برآمد ہوا۔

انہوں نے کہا کہ بانی ایم کیو ایم کی اے پی ایم ایس او اور اندرون سندھ کے لڑکوں کو انڈیا بھینجے کی منصوبہ بندی تھی۔ کچھ لڑکوں نے انڈیا کے مختلف شہروں میں جانے اور وہاں ٹریننگ لینے کا اعتراف کیا۔ ملزموں کا مقصد بارڈر سے اسلحہ اور دیگر سامان منتقل کرنا تھا۔

یہ بھی پڑھیں : وسیم اختر سمیت 7 ایم کیو ایم رہنما اشتعال انگیز تقاریر کے 21 مقدمات میں بری

ان کا کہنا تھا کہ ملزموں کو عسکری تربیت کے ساتھ اندرون سندھ کے حساب سے اونٹ چلانے کی بھی تربیت دی گئی۔ پریس کانفرنس میں ایم کیو ایم لندن کے رہنما واسع جلیل پر دہشتگرد کے الزامات پر مشتمل آڈیو بھی سنائی گئی۔

ڈی آئی جی سی ٹی ڈی نے کہا کہ اب تک گرفتاریوں میں دو اہم نام انیس ایڈووکیٹ اور واسع جلیل کے سامنے آئے ہیں۔

انیس ایڈووکیٹ کو دو بار تفتیش کے لئے بلایا جاچکا ہے، وہ شامل تفتیش ہیں۔

انہوں نے مزید کہا انیس ایڈووکیٹ سے متعلق اہم ثبوت ملا ہے، ان کے پاس اندرون سندھ کے لڑکوں کو عسکری تربیت دینے کے لئے بیرون ملک بھیجنے کا ٹاسک تھا۔ انیس ایڈووکیٹ کو مزید ایک سے دو روز میں بلایا جائے گا۔ انیس ایڈوکیٹ کو ملک چھوڑنے سے منع کیا گیا ہے۔ حقائق مزید سامنے آئے تو چالان کیا جائے گا۔ واسع جلیل کی گرفتاری کیلئے لکھا جائے گا، جو امریکہ میں ہیں۔

عمر شاہد حامد کا کہنا تھا کہ گرفتار ملزم نعیم نے تہران میں انیس ایڈوکیٹ سے ملنے اور احکامات لینے کا انکشاف کیا۔ بینک سمیت دیگر معاملات سامنے آئے ہیں۔

متعلقہ خبریں