جی ٹی وی نیٹ ورک
اہم خبریں

پیرس حملوں کے مقدمے میں 19 افراد کو مجرم قرار دے دیا گیا

پیرس حملوں

پیرس : 2015 میں فرانس میں ہونے والے مہلک ترین حملوں میں سے ایک دہشت گردی کے واقعے میں 130 افراد کو ہلاک کرنے والے مرکزی ملزم صلاح عبدالسلام سمیت 19 افراد کو مجرم قرار دے دیا گیا ہے۔

ان فرانس کی ایک عدالت نے غیر معمولی سکیورٹی کے گھیرے میں 19 افراد کو 2015 میں بٹاکلان تھیٹر، پیرس کیفے اور فرانس کے نیشنل اسٹیڈیم پر داعش کے حملوں کے لیے دہشت گردی سے متعلق الزامات کا مجرم قرار دیا ہے۔

مرکزی ملزم صلاح عبدالسلام کو دیگر الزامات کے علاوہ دہشت گرد ادارے سے تعلق کے الزام میں قتل اور اقدام قتل کا مجرم بھی قرار دیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں : پیرس میں گھریلو تشدد کے خلاف ہزاروں خواتین کا احتجاج

دوران سماعت پیرس پر حملہ کرنے والی داعش کی 10 رکنی ٹیم کا واحد زندہ بچ جانے والا مرکزی ملزم رویا اور متاثرین سے معافی مانگی اور ججوں سے اپنی "غلطیوں” کو معاف کرنے کی التجاء کی۔

عبدالسلام کو پیرول کے بغیر عمر قید کی سزا کا سامنا ہے، جو کہ فرانس کے نظام انصاف کے تحت سب سے سخت سزا ہے۔

زیادہ تر دیگر ملزمان پر جھوٹی شناخت بنانے، حملہ آوروں کو منتقل کرنے یا انہیں رقم، فون، دھماکہ خیز مواد یا ہتھیار فراہم کرنے میں مدد کرنے کا الزام ہے۔

متعلقہ خبریں