جی ٹی وی نیٹ ورک
اہم خبریں

خیبر پختونخوا میں ایک ہزار سرکاری پرائمری اسکولز ذاتی عمارتوں سے محروم

کرائے کی عمارتوں

پشاور : خیبر پختونخوا میں ایک ہزار اسکولز کی ذاتی عمارتیں نہ ہونے کا انکشاف ہوا ہے، جو کرائے کی عمارتوں میں قائم کئے گئے ہیں۔

سال 2021 کے محکمہ تعلیم کی رپورٹ نے پرائمری اسکولز کا پول کھول دیا ہے۔ وزیر تعلیم شہرام ترکئی کے آبائی ضلع صوابی میں 35 اسکولز کرائے کی عمارتوں میں قائم کیئے گئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : خیبر پختونخوا میں لمپی اسکن سے 114 جانور ہلاک

رپورٹ کے مطابق صوبے کے 410 پرائمری اسکولز کی چھت نہیں ہے، 457 اسکولز کرائے کی عمارتوں میں قائم ہیں۔ 443 اسکولز عطیہ کی گئیں عمارتوں میں قائم ہیں، 314 اسکولز کو دوسرے اسکولوں میں ایڈجسٹ کیا گیا ہے۔

مجموعی طور پر صوبے میں لڑکوں کے 357، لڑکیوں کے 53 پرائمری اسکولز کے پاس عمارتیں نہیں ہیں۔

متعلقہ خبریں