جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

ہمارا نظام طاقتور ڈاکو کو نہیں پکڑ سکتا : وزیر اعظم عمران خان

ہمارا نظام طاقتور

لاہور : وزیر اعظم کا کہنا ہے کہ طاقتور کو قانون کے تابع لانا ہماری ذمہ داری ہے، ہمارا نظام طاقتور ڈاکو کو نہیں پکڑ سکتا۔

وزیر اعظم عمران خان نے پرائم منسٹرافورڈایبل ہاؤسنگ پراجیکٹ کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ س معاشرے میں امیر کم اور غریب زیادہ ہوں وہ معاشرہ کبھی اوپر نہیں جاتا۔ ایلیٹ کلاس نے ملک کو ہر طرح سے اپنے قبضے میں لیا ہوا ہے، کوئی یہ نہیں سوچتا کہ غریب عوام کو کیسی تعلیم مل رہی ہے

انہوں نے کہا کہ جیلوں میں صرف غریب لوگ ہی ہوتے ہیں، جن کے پاس وکیلوں کیلئے پیسے نہیں وہی جیل جاتے ہیں۔  ہمارا نظام طاقتور ڈاکو کو نہیں پکڑ سکتا۔

ان کا کہنا تھا کہ لاہور میں آہستہ آہستہ کچی آبادی بنتے دیکھی، یہاں آبادی نہیں ہوتی تھی۔ زمینوں کی قیمتیں بڑھنے سے کچی آبادیاں بننا شروع ہوگئیں۔ کچی آبادیوں کا مقصد بجلی نہ پانی اور نہ سیوریج سسٹم۔ کبھی کسی نے نہیں سوچا یہ لوگ کیسے رہتے ہوں گے۔

آدھا کراچی کچی آبادی پر مشتمل ہے۔ کراچی کے لوگ بجلی کے کنکشن کیلئے رشوت دیتے ہیں۔ قبضہ مافیا کمزور لوگوں اور حکومت کی زمینوں پر قبضہ کرتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : وزیر اعظم کل تین روزہ دورے پر سعودی عرب روانہ ہوں گے

وزیر اعظم نے کہا کہ آج پاکستان میں 30 سال سے حکومت کرنیوالے اکٹھے ہوگئے ہیں۔ حساب دینے کو تیار نہیں، شور مچایا ہوا ہے۔  کرپشن بچانے کیلئے پی ڈی ایم کے نام سے یونین بنی ہوئی ہے۔ پی ڈی ایم والے این آر او مانگ رہے ہیں، یہ لوگ خود کو قانون سے اوپر سمجھتے ہیں۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ طاقتور کو قانون کے تابع لانا ہماری ذمہ داری ہے۔ جو قومیں ریاست مدینہ کے اصولوں پر چلیں گی وہ اوپر چلی جائیں گی۔

انہوں نے کہا کہ فور کلوژر لاء کی وجہ سے بینک قرض نہیں دیتا تھا۔ بھارت جیسے ملک میں گھروں کیلئے 10 فیصد قرض دیا جاتا ہے۔ یورپ اور امریکا میں 80 فیصد لوگوں کو گھروں کیلئے قرض دیا جاتا ہے۔ حکومت ہر گھر پر 3 لاکھ روپے سبسڈی دے رہی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ کم لاگت ہاؤسنگ اسکیم انقلاب کی شروعات ہے۔ کچی آبادیوں کے مکینوں کو مالکانہ حقوق دیں گے۔

ہاؤسنگ سیکٹر سے 30 صنعتیں وابستہ ہیں، جس سے بیروزگاری کا مسئلہ بھی حل ہوجائے گا۔

وزیر اعظم نے مزید کہا کہ ماسک کا استعمال یقینی بنائیں۔ ہم کورونا کی تشویشناک صورت حال سے گزر رہے ہیں، ہم نے کیسز کی شرح کو نیچے لے کر آنا ہے۔ بھارت میں اسپتالوں کی ابتر صورت حال ہے۔ کورونا سے لوگ سڑکوں پر مررہے ہیں۔

متعلقہ خبریں