جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

پاکستان کے پارلیمانی وفد کا دورہ کابل، طیارے کو لینڈنگ کی اجازت نہ ملنے کے باعث ملتوی

لینڈنگ کی اجازت نہ

اسلام آباد : پاکستان کا پارلیمانی وفد کابل میں طیارے کو لینڈنگ کی اجازت نہ ملنے کے باعث واپس آگیا۔

اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کی قیادت میں پارلیمانی وفد دورہ کابل کے لیئے روانہ ہوا، تاہم طیارے کو لینڈنگ کی اجازت نہ ملنے کے باعث دورہ ملتوی کردیا گیا۔

ذرائع کے مطابق طیارہ کابل ایئرپورٹ کی حدود میں لینڈنگ بے میں آچکا تھا۔ لینڈنگ کی تیاری کے دوران مارٹر گولے نما کسی چیز نے رن وے کو ہٹ کیا۔ مارٹر گولہ لگنے کے بعد طیارہ کو فضاء میں دوبارہ بلند کرنا پڑا۔

یہ بھی پڑھیں : روسی وزیر خارجہ کی آرمی چیف سے ملاقات، افغان مفاہمتی عمل پر تبادلہ خیال

پندرہ منٹ بعد دوبارہ لینڈنگ کی کوشش ہوئی مگر رن وے کلئیر نہیں تھا۔ طیارہ ڈیڑھ گھنٹے تک افغانستان کی فضاء میں چکر لگاتا رہا۔ حکام نے طیارہ کو لینڈنگ کی اجازت دینے سے انکار کرتے ہوئے واپس جانے کی ہدایت کی۔

اس دوران کابل ائرپورٹ حکام نے ائرپورٹ کی بندش کے باوجود بعض دیگر طیاروں کو لینڈنگ کی اجازت دی۔ افغان ویلوسی جرگہ کے سربراہ پاکستان وفد کے استقبال کے لیے ایئر پورٹ پہنچے مگر انہیں واپس جانا پڑا۔

متعلقہ خبریں