جی ٹی وی نیٹ ورک
اہم خبریں

پیٹرول مزید مہنگا کرنا پڑے گا ، وزیر اعظم عمران خان کا قوم سے خطاب

Prime Minister Imran Khan announces the largest relief program in Pakistan's history
وزیر اعظم عمران خان نے قوم سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پیٹرول کی قیمت بڑھانی پڑے گی کیونکہ اگر ہم نے نہیں بڑھایا تو ہمارا خسارہ بڑھتا جارہا ہے۔ قرضوں میں سود کی مد میں پہلے ہی خسارہ پڑا ہوا اور میں آج آپ کو کہہ رہا ہوں پیٹرول کی قیمت بڑھانی پڑے گی۔

 

وزیر اعظم عمران خان نے اپنے خطاب میں 120ارب روپے کے پیکج کا اعلان کیا جس کے تحت 6 ماہ تک گھی، آٹا، دال کی قیمت میں 30فیصد ڈسکاؤنٹ ملے گا جس سے 13کروڑ لوگ مستفید ہوں گے۔

قوم سے خطاب کے دوران انہوں نے احساس پروگرام کی ٹیم کا شکریہ ادا کیا جنہوں نے تین برس میں تمام لوگوں کا ڈیٹا جمع کیا کیونکہ ڈیٹا کے بغیر سبسڈی دینا آسان کام نہیں تھا۔

عمران خان کا اپنے خطاب میں کہنا تھا کہ جب حکومت ملی تو پاکستان کی تاریخ کا سب سے بڑا خسارہ اور قرضہ ملا تھا ہمیں مجبوری کے تحت آئی ایم ایف کے پاس جانا پڑا۔

وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ کورونا وائرس کے بعدتمام ممالک متاثر ہوئے ، غریب ممالک اس وائرس کی وجہ سے زیادہ متاثر ہوئے۔

عمراں خان نے کہا کہ کورونا سے نمٹنے کے لیے ہم نے 8 ارب ڈالر خرچ کیے ساتھ ہی میڈیا کو چاہیے وہ اپنی خبروں اور تجزیوں کا جائزہ لے کہ کیا ہماری حکومت کی وجہ سے مہنگائی بڑھی جبکہ پوری دنیامیں صورتحال مایوس کن تھی۔

 

وزیر اعظم عمران خان نے کہا پاکستان میں مہنگائی کی شرح 9 فیصد ہے جبکہ عالمی نشریاتی ادارے بلومبرگ کے مطابق اشیا ضروریہ میں 50 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ترکی میں مہنگائی 19 فیصد ہے، ترکی کی کرنسی 35 فیصد گراوٹ کا شکار ہے، امریکا اور یورپ میں 2008 کے بعد سب سے زیادہ مہنگائی ہوئی ہے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ پاکستان میں موسم سرما آنے والا ہے اور ساتھ ہی گیس کا مسئلہ بھی جم لے گا، امریکا میں قدرتی گیس کی قیمت میں تقریباً 116 فیصد اور یورپ میں 300 فیصد تک اضافہ ہوا ہے۔

متعلقہ خبریں