جی ٹی وی نیٹ ورک
پاکستان

پی ٹی آئی حکومت نے نیا پاکستان نہیں بلکہ نئے قبرستان بنائے: سراج الحق

نئے قبرستان

اسلام آباد: سینیٹر سراج الحق کا کہنا ہے کہ پی ٹی آئی حکومت نے نیا پاکستان تو نہیں بلکہ نئے قبرستان بنائے ہیں، پی ٹی آئی کی حکومت میں صرف کفن کے کاروبار میں اضافہ ہوا۔

امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے اسامہ ستی کے گھر کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ آج ہم اسامہ ستی کے گھر کے باہر موجود ہیں مگر اسامہ موجود نہیں ہے،

وزیراعظم اور صدر ہاؤس کے قریب اسامہ کو بے دردی سے قتل کیا گیا۔ اسلام آباد کے شہری کو شاباش دیتا ہوں کہ احتجاج کیا گیا۔

سراج الحق کا کہنا تھا کہ اسامہ ستی کے والد سے ملاقات کی ہے، انکوائری رپورٹ میں پولیس نے ظلم کیا ہے۔ پولیس اہلکاروں نے جان بوجھ پر ایک نوجوان کو قتل کیا، بوڑھے باپ کو جب سہارے کی ضرورت تھے اس کا سہرا چھین لیا گیا۔

موجودہ انتظامیہ نے ایک ماں سے بچہ چھین لیا، وفاقی دارلحکومت میں جتنی بھی مزمت کی جائے کم ہے۔

یہ بھی پڑھیں: عمران خان نے کہا تھا کہ کشمیر کا سفیر بنوں گا اور کشمیر کو مودی کے حوالے کردیا: سراج الحق

ان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم کو اسامہ ستی کے گھر آنا چاہیئے تھا، مگر وزیراعظم نے آفس بلایا جو افسوسناک ہے۔ کوئٹہ، قصور پشاور میں آئے روز قتل عام ہو رہا ہے لواحقین کو لاش تک نہیں ملتی، پی ٹی آئی حکومت نے نیا پاکستان تو نہیں بلکہ نئے قبرستان بنائے ہیں۔

سراج الحق نے کہا کہ پی ٹی آئی کی حکومت میں صرف کفن کے کاروبار میں اضافہ ہوا،

آج وزیراعظم نے اپنی ناکامی کا اعتراف کیا۔ وزرا کو وزیراعظم نے کہا کہ آپکی کارکردگی اچھی نہیں ہے، عمران خان نے کہا کہ تیاری نہیں تھی۔ اب بھی حکومت کے سامنے کوئی منزل نہیں۔

انہوں نے کہا کہ ہم اسامہ ستی کے خاندان کے ساتھ کھڑے ہیں، اسامہ کے قاتلوں کو اسلام آباد کی سڑکوں پر سزا دی جائے۔ قوم نے ایک ایک پیسہ اکھٹا کر کے حکمرانوں کے ہاتھوں میں اسی سے ایک نوجوان کو شہید کیا۔ ہم اس کیس کا تعاقب کریں گے، جب تک ملزمان کو سزا نہیں ملتی تب تک ان کے ساتھ کھڑے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ہم غمزدہ خاندان کیساتھ کھڑے ہیں، اسامہ کے قاتلوں کو سرعام سزا دی جائے، تاکہ آئندہ کسی ماں کا بچہ اس سے نہ چھینا جائے۔ ہم عوام کی نمائندگی اور حکومت کا تعاقب کریں گے، جب تک مجرموں کو سزا نہ ملی اس وقت اپنی مہم کو جاری رکھیں گے۔

متعلقہ خبریں