جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

کوئٹہ : نرس نے گھریلو جھگڑوں سے پریشان ہوکر شوہر اور دو معصوم بچیوں کو قتل کردیا

بچیوں کو

کوئٹہ : تہرے قتل کی لرزہ خیز واردات کی ملزمہ نرس نے اپنے شوہر اور دو معصوم بچیوں کو بے دردی سے قتل کرنے کا اعتراف کر لیا، خاتون کا ویڈیو بیان وائرل ہوگیا۔

گزشتہ روز کوئٹہ چھاؤنی کی حدود چھمب لائن میں ایک مکان کے کمرے سے ایک مرد عرفان مسیح اور دو بچیوں کی گلے کٹی لاشیں اور خاتون سمیرا کو زخمی حالت میں نکالا گیا۔ خاتون کو نیم بہوشی کی حالت میں سی ایم ایچ اسپتال منتقل کیا گیا تھا۔

پولیس کو پہلے ہی خاتون پر شک ہوا۔ کمرے سے خط بھی ملا تھا، جس میں خاتون نے اعتراف جرم کیا تھا۔ خاتون کے ہوش میں آتے ہی پولیس نے اس کا ویڈیو بیان ریکارڈ کیا۔

ویڈیو بیان میں خاتون نے اعتراف کیا کہ اس بے پہلے اپنے شوہر اور بچیوں کو بے ہوشی کے انجکشن لگائے اور بعد میں چھری سے ان کے گلے کاٹے۔

یہ بھی پڑھیں : گوجرانوالہ میں ماں کا 4 بچوں سمیت قتل

خاتون بعد میں بچیوں کے ساتھ لیٹ گئی اور کمرے میں گیس کھلی چھوڑ دی، جس سے وہ خود بیہوش ہوگئی۔ خاتون خودکشی کرنا چاہتی تھی مگر وہ زندہ بچ گئی۔

خاتون نے قتل کی وجہ اپنے شوہر کی بے وفائی بتائی۔ خاتون کا کہنا تھا کہ اس کا شوہر دوسرے عورت سے شادی کرنے کے لئے اسے مارتا تھا اور اکثر اسے اور اس کی بچیوں کو جان سے مارنے کی دھمکی بھی دیتا تھاْ

خاتون نے بتایا کہ وہ روز روز کے جھگڑے سے تنگ آگئی تھی، اسی لئے اس نے اپنے شوہر اور بچوں کو قتل کرکے خود کا خاتمہ بھی کرنا چاہا تھا۔

پولیس کو واقعہ کی اطلاع عرفان مسیح کی بہن نے دی، جو اپنے شوہر کے ہمراہ بھائی سے ملنے آئی تھی۔ کافی دیر تک کٹھکٹانے کے بعد گھر کا دروازہ نہ کھولنے پر انہوں نے دیوار پھلانگ کر اندر جاکر دیکھا تو باپ اور بیٹیاں مردہ حالت میں جبکہ خاتون بے ہوشی کی حالت میں ملیں۔

ملزمہ سول اسپتال کے چلڈرن وارڈ کی نرس ہے۔ قتل ہونے والا خاتون کا شوہر فوج کا ملازم ہے۔ بچیوں کی عمریں ساڑھے 3 سال اور 6 سال ہیں۔

متعلقہ خبریں