جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

قیاس آرائیوں کی بنیاد پر اداروں کی تضحیک پاکستان کو نقصان پہنچانے کے مترادف ہے : وزیر خارجہ

قیاس آرائیوں کی بنیاد

اسلام آباد : شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ محض قیاس آرائیوں کی بنیاد پر اداروں کی تضحیک پاکستان کے بیانیے اور ملکی مفاد کو نقصان پہنچانے کے مترادف ہے۔

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے جاری بیان میں کہا ہے کہ ڈی جی آئی ایس پی آر کا بیان آئین اور قانون کے عین مطابق ہے۔ وہ واضح کر چکے ہیں کہ پاک فوج اپنا آئینی کردار ادا کر رہی ہیں۔ وہ درست کہہ رہے ہیں کہ ان کی ذمہ داریوں میں بے پناہ اضافہ ہو چکا ہے۔

انہوں نے کہا کہ جو قوتیں ان حالات میں ملک میں انتشار پھیلارہی ہیں، وہ پاکستان کے مفادت کا تحفظ نہیں کررہیں۔ مظفرآباد میں کھڑے ہو کر جلسوں میں یہ کہنا کہ کشمیر کا سودا کر دیا گیا ہے یہ کتنی غیر ذمہ دارانہ گفتگو ہے۔ پاکستان میں انتشار پھیلانے کا فائدہ بھارت کو ہوگا۔

ان کا کہنا تھا کہ پی ڈی ایم پاکستان کے مفادات کو سامنے رکھے۔ ہم نے اسپیکر کی سربراہی میں پی ڈی ایم سے کئی ملاقاتیں کیں۔ اپوزیشن جان بوجھ کر اداروں اور شخصیات کو متنازع بنانا چاہتی ہے۔

یہ بھی پڑھیں : سیاست میں نہ گھسیٹا جائے، کسی سے در پردہ رابطے نہیں، ثبوت ہیں تو سامنے لائیں : پاک فوج

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ ان کا کہنا تھا کہ اگر اپوزیشن کے پاس شواہد ہیں تو سامنے لائے محض قیاس آرائیوں کی بنیاد پر اداروں کی تضحیک پاکستان کے بیانیے اور ملکی مفاد کو نقصان پہنچانے کے مترادف ہے۔

وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ 14 نومبر 2020 کو جو ہم نے ڈوزئیر دنیا کے سامنے رکھا اس میں ان قوتوں کے حوالے سے ناقابل تردید شواہد موجود ہیں جو پاکستان کو عدم استحکام سے دو چار کرنا چاہتی ہیں۔ کچھ بیرونی قوتیں ایسی ہیں جو افغانستان کی سرزمین کو استعمال کر کے پاکستان میں دہشتگردی کی پشت پناہی کر رہی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اقوام متحدہ مانیٹرنگ ٹیم کی رپورٹ نے پاکستان کے مؤقف کی تائید کر دی ہے۔ ای یو ڈس انفولیب کی حالیہ رپورٹ نے ہندوستان کو پوری طرح بے نقاب کر دیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ مشرقی سرحد پر بار بار لائن آف کنٹرول کی خلاف ورزیاں ہو رہی ہیں ہماری پوسٹس کو، جوانوں کو اور عام شہریوں کو نشانہ بنایا جاتا ہے۔ اس وقت بھارت کا اصلی چہرہ دنیا کے سامنے آ چکا ہے۔

متعلقہ خبریں