جی ٹی وی نیٹ ورک
پاکستان

نوکریوں سے نکالے گئے افراد کی شکایات کے ازالے کیلئے سیل بنادیاہے،سعیدغنی

نوکریوں

پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما اور سندھ کے صوبائی وزیر تعلیم و محنت سعید غنی کا کہنا ہےکہ لاک ڈاؤن کے دوران جن افراد کو نوکریوں سے نکالا جارہا ہے ان کی شکایات کے ازالے کے لیے شکایتی سیل بنادیا ہے۔

کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے سعید غنی کا کہنا تھا کہ 2 دن میں 32 ہزار افراد تک راشن پہنچا چکے ہیں، مجمع جمع کرکے راشن تقسیم کرنے پر پابندی عائد کردی ہے، یہ لاک ڈاؤن کی روح کے خلاف ہے۔

سعید غنی کا کہنا تھا کہ راشن کی مد میں سندھ حکومت نے ایک ارب 80 کروڑ روپے جاری کیے ہیں، صوبے میں راشن تقسیم کے لیے کمیٹیاں بھی بنائی گئیں ہیں۔

 ان کا کہنا تھا کہ پرائیوٹ اسکولز کو بھی کہا ہےکہ جو خاندان لاک ڈاؤن سے متاثر ہوئے ہیں انہیں ریلیف دیا جائے۔

الخدمت فاؤنڈیشن سندھ کے نائب صدر ڈاکٹر عبدالقادر کورونا وائرس سے جاں بحق

 دوسری جانب وزير اطلاعات ناصرحسین شاہ کا کہنا ہے کہ صوبے میں لاک ڈاؤن برقرار ہے، کچھ لازمی شعبے کھلے رکھے ہیں جن کی وجہ سے سڑکوں پرلوگ نظر آتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ صنعتوں سے متعلق ضابطہ کار بنارہے  ہیں، لائحہ عمل طے کرنے کے بعد ہی فیکٹریاں کھولنے کی اجازت دی جائے گی۔

ناصر حسین شاہ نے بتایا کہ سندھ حکومت کوشش کررہی ہے ہر جگہ ڈاکٹرز اور طبی عملے کو کٹس مہیا کی جائیں۔

متعلقہ خبریں