جی ٹی وی نیٹ ورک
پاکستان

سندھ کے صوبائی وزیر تعلیم وفاق پر برس پڑے، فنڈز جاری کرنے کا مطالبہ

کراچی : سید سردار علی شاہ نے کہا ہے کہ نیا پاکستان پڑھی لکھی قوم سے بنے گا، سندھ، ملک کو چلاتا ہے، لوگ نقل کی اجازت کے لیئے احتجاج کررہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق سندھ کے وزیر تعلیم وسیاحت و ثقافت سید سردار علی شاھ  نے اپنے وڈیو بیان میں کہا ہے کہ وفاق سے 650 ارب سے زائد کی منتقلی ہونی ہوتی ہے، وفاق سے نوماہ میں 140 ارب کم منتقل ہوئے، کم منتقلی سے صوبے کا ترقیاتی بجٹ متاثر ہوکر رہ گیا ہے۔

وزیر تعلیم نے کہا کہ اوپر بیٹھے نئے پاکستان بنانے والے یہ بات نہیں سمجھتے ہیں کہ نیا پاکستان پڑھی لکھی قوم سے ہی بنے گا،  پیسے منتقل نہ ہونے سے، نہ تو فرنیچر خرید سکتے ہیں اور نہ ہی اے ڈی پی بن سکتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ سندھ کے تعلیمی بجٹ 175 ارب روپے ہے اور 145 ارب تنخواہوں میں ادا ہوجاتے ہیں، پندرہ ارب ایجوکیشن فائونڈیش اور گرانٹس میں جاتے ہیں، پندرہ ارب ترقیاتی بجٹ ہے، جس سے عمارتوں کی تعمیر مرمت کے کام کیئے جاتے ہیں۔

سردار علی شاھ  نت کہا کہ سندھ، ملک کو چلاتا ہے اور 65 فیصد بجٹ سے چاروں صوبے چلتے ہیں، بجٹ کا 65 فیصد حصہ سندھ سے وصول کیا جاتا ہے، ہم اپنا حق مانگتے ہیں تو گالم گلوچ اور طوفان بدتمیزی اختیار کیا جاتا ہے، وزیراعظم سمیت تمام افراد دھمکیوں اور غیر اخلاقی انداز سے ٹالنے کے راستے اختیار کرتے ہیں۔

صوبائی وزیر تعلیم نے کہا کے امتحانات میں نقل روکنے کے لیئے لوگ معطل کیئے، لوگ نقل کی اجازت کے لیئے احتجاج کررہے ہیں، یہ معاشرے کا رویہ بن گیا ہے کہ ہمیں نقل کرنے دو۔

انہوں نے کہا کہ ہم نقل کا خاتمہ کریں گے، جو افراد معطل کیئے، ان کے لیئے وزیر اعلیٰ سندھ کو خط  لکھ کر کمیشن مقرر کرنے کا مطالبہ کیا ہے، جو اس ضمن میں مکمل تحقیقات کرے گا اور جرم کے مرتکب لوگوں کا تعین کرے گا۔

متعلقہ خبریں