جی ٹی وی نیٹ ورک
اہم خبریں

شہبازشریف کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا حکم جاری

اسلام آباد: لاہور ہائیکورٹ میں جسٹس ملک شہزاد احمد خان کی سربراہی میں 2 رکنی بنچ نے سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف کا نام  ای سی ایل میں شامل کردیا۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ میں جسٹس ملک شہزاد احمد خان کی سربراہی میں 2 رکنی بنچ نے سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف کا نام  ای سی ایل میں شامل کرنے کے خلاف درخواست کی سماعت کی، شہباز شریف کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ نیب نے جب شہباز شریف کو بلایا تو شہباز شریف پیش ہوئے پھر بھی نام ای سی ایل میں ڈالا گیا۔

شہبازشریف کے وکیل نے دلائل میں کہا کہ عدالت ان کے مؤکل کی ضمانت پہلے ہی منظور کرچکی ہے، اس کیس میں بھی نیب کے حوالے سے عدالت کے ریمارکس سب کے سامنے ہیں۔ سابق وزیراعلیٰ کے وکیل نے مزید مؤقف اپنایا کہ شہبازشریف کا نام ای سی ایل سے نہ نکالنا بدنیتی پر مبنی ہے، ان کو اپنی بہو اور پوتی کی خیریت دریافت کرنے بیرون ملک جانا ہے۔

اس پر عدالت کو بتایا گیا کہ کیسز پر انکوائری جاری ہے اور اب ریفرنس دائر ہونے ہیں وکیل کے مطابق  شہبازشریف کا نام غیر قانونی اثاثے بنانے کے ریفرنس میں ای سی ایل میں ڈالا گیا۔ وہ ہرانکوائری میں پیش ہوتے رہے ہیں.

جبکہ دوسری طرف شہباز شریف کا میڈیا سے غیر رسمی گفتگو میں کہناتھا کہ اللہ کا بڑا کرم ہے میاں صاحب کی ضمانت ہوئی۔ عدالتوں کے فیصلوں کا ہمیشہ احترام کیا ہے ۔ میاں صاحب گھر آئیں گے تو انکے علاج معالجہ کے حوالہ سے مشاورت کریں گے۔ پارٹی کے تمام کارکنان اور عوام کو میاں صاحب کی رہائی کی مبارکباد پیش کرتا ہوں۔

اس کے ساتھ ساتھ سپریم کورٹ کے اس فیصلے پر رہنما مسلم لیگ (ن) اور سابق وزیراعظم کی دختر مریم نواز نے سوشل میڈیا پر اللہ تعالیٰ کا شکر ادا کیا ۔

متعلقہ خبریں