جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

بجلی اور گیس مزید مہنگی ہوں گی، آئی ایم ایف کی کڑی شرائط سامنے آگئیں

کڑی شرائط

اسلام آباد : آئی ایم ایف سے قرض کی وصولی پاکستانی عوام کو بہت ہی مہنگی پڑنے والی ہیں۔ آئی ایم ایف معاہدے کی کڑی شرائط سامنے آگئیں ہیں۔

آئی ایم ایف اور حکومت کے درمیان معاہدے کی 4 کڑی شرائط سامنے آگئیں۔ آئی ایم ایف شرائط کے مطابق حکومت 30 جنوری تک نجی پاور کمپنیوں کو چلانے کی پابند ہے۔

155 ارب کے سالانہ کیپسٹی چارجز کا 25 فیصد بجلی بلوں سے وصول ہوگا۔ بجلی بلوں کے ذریعے 40 ارب روپے وصول کیے جائیں گے۔

یہ بھی پڑھیں : 5 ماہ میں قرضوں میں 344 ارب روپے کا اضافہ: اسٹیٹ بینک

آئی ایم ایف معاہدے کے مطابق گیس نرخوں میں 214 فیصد تک اضافہ بھی ہوگا۔ حکومت 28 فروری تک آمدن واخراجات پارلیمنٹ کو بتانے اور 31 مارچ تک اسٹیٹ بینک کا بل پارلیمان میں لانے کی پابند ہے۔

بل کے تحت خسارہ پورا کرنے کیلئے مرکزی بینک نئے نوٹ نہیں چھاپے گا۔ بینک صارفین کے لین دین کی کڑی نگرانی کی جائے گی۔

متعلقہ خبریں