جی ٹی وی نیٹ ورک
سندھ

واضح ہوگیا کیپٹن (ر) صفدر کی گرفتاری کیلئے پولیس پر دباؤ ڈالا گیا، مراد علی شاہ

مراد علی

وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے یہ واضح ہوچکا کہ کراچی میں مسلم لیگ (ن) کے رہنما کیپٹن (ر) صفدر کی گرفتاری کے لیے پولیس پر دباؤ ڈالا گیا اور جعلی مقدمہ بنوایا گیا۔

سندھ اسمبلی میں خطاب کے دوران انہوں نے کہا کہ حکومت مخالف اپوزیشن اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کے جلسے کے بعد یہ گھبراہٹ کا شکار ہوئے اور انہوں نے پولیس پر غلط دباؤ ڈال کر مقدمہ درج کرایا گیا۔

سید مراد علی شاہ نے کہا کہ ‘ہمیں مزار قائد کا احترام سب کرتے ہیں لیکن اگر کوئی عمل خلاف قانون ہوا تھا تو اسے قانونی طریقے سے سامنے لاتے جبکہ پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے متعدد مرتبہ مزار قائد میں آخر اس کی بے حرمتی کرچکے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ‘ایک مفرور شخص کو سامنے لا کر جعلی مقدمہ درج کرایا گیا’۔

سید مراد علی شاہ نے کہا کہ سندھ میں مہمان نوازی کی روایت قدیم اور اب تک قائم ہے لیکن پولیس پر غیر قانونی طریقے سے دباؤ ڈال کر مہمانوں کے خلاف مقدمہ درج کرایا گیا۔

ان کا کہنا تھا کہ گزشتہ دو دنوں میں بہت کچھ ہوا، میں کئی چیزیں بتاتا سکتا ہوں اور متعدد کا اظہار نہیں کرسکتا ہے۔

آئی جی سندھ کا مبینہ اغواء : سندھ بار کونسل کی چیف جسٹس سے فوری از خود نوٹس لینے کی اپیل

وزیر اعلیٰ سندھ نے کہا کہ ‘چیف سیکریٹری اور آئی جی کو کابینہ میں طلب کرنے کی باتیں ہوئیں، کیا سندھ کوئی کالونی ہے، واضح کردوں کہ دونوں افسران صوبائی حکومت کے ملازم ہیں’۔

انہوں نے کہا کہ اس معاملے کی مکمل انکوائری ہوگی اور معاملے کی ساری جزیات سامنے آجائے گئیں۔

سید مراد علی شاہ نے کہا کہ ‘وہ افسوس کا دن تھا لیکن حکومتی اراکین نے خوشیاں منائیں جب پاکستان جیسے گندم میں خود کفیل ملک کے اندر غیرملکی گندم داخل ہوئی’۔

واضح رہے کہ اس سے قبل پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور پارٹی قائد نواز شریف اور مریم نواز کے ترجمان محمد زبیر نے کہا تھا کہ کیپٹن (ر) محمد صفدر کی گرفتاری کے لیے سندھ پولیس پر دباؤ ڈالا گیا اور ریاست نے ایک اسٹنگ آپریشن کیا۔

کراچی میں کیپٹن (ر) صفدر کی گرفتاری کے بعد میڈیا سے گفتگو میں انہوں نے کہا تھا کہ یہ ریاستی دہشت گردی ہے اور اگر ہم آج اس کی مذمت نہیں کریں گے تو کل ہم سب کو اس سے گزرنا پڑے گا۔

یاد رہے کہ 18 اکتوبر کو کراچی میں اپوزیشن اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کے منعقدہ اجلاس میں شرکت کے لیے آئے ہوئے پاکستان مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر مریم نواز کے شوہر کیپٹن (ر) صفدر کو مزار قائد میں نعرے بازی کرنے پر علی الصبح ہوٹل سے گرفتار کیا گیا تھا۔

متعلقہ خبریں