جی ٹی وی نیٹ ورک
دنیا

ایئرپورٹس کا نظام چلانے کیلئے طالبان کی یورپی یونین سے مدد کی درخواست

ایئرپورٹس کا نظام چلانے

دوحہ : طالبان نے ملکی ایئرپورٹس کا نظام چلانے کے لیے یورپی یونین سے مدد کی درخواست کردی ہے۔

قطر کے دارالحکومت دوحہ میں یورپی یونین اور طالبان کے وفد درمیان ملاقات ہوئی، وفد میں وزیر خارجہ امیر خان متقی، صحت اور تعلیم کے وزراء، مرکزی بینک کے گورنر، وزارت خارجہ، خزانہ، داخلہ اور انٹیلیجنس ڈائریکٹریٹ کے حکام شامل تھے۔

طالبان کی جانب سے افغانستان کے ایئرپورٹس کا نظام چلانے میں یورپی یونین سے مدد کی درخواست کی گئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں : طالبان کا داعش کے 600 دہشت گردوں کو گرفتار کرنے کا دعویٰ

یورپی یونین نے واضح کیا ہے کہ طالبان کے ساتھ مذاکرات کا مطلب ان کو قطعاً تسلیم کرنا نہیں ہے۔ بیان میں کہا گیا کہ مذاکرات یورپی یونین اور افغان عوام کے مفادات کو مدنظر رکھتے ہوئے کیے گئے ہیں۔

ای یو کا کہنا ہے کہ طالبان نے ان کے خلاف کام کرنے والے افغانوں کو عام معافی دینے کے وعدے پر عمل درآمد کی مکمل یقین دہانی کروائی ہے اور کہا ہے کہ افغانوں اور غیر ملکیوں کو ان کی خواہش کے مطابق افغانستان سے نکلنے کی اجازت ہے۔

یورپی یونین کی طرف سے افغانستان کے لیے خصوصی نمائندے ٹومس نکلسن نے وفد کی نمائندگی کی، جس میں یورپی کمیشن کے انسانی امداد، بین الاقوامی شراکت داری اور نقل مکانی سے متعلق حکام بھی شریک تھے۔

متعلقہ خبریں