جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

شہزاد اکبر پاکستان کی سیاست میں گند کرنے کے لئے ہیں : عظمیٰ بخاری

پاکستان کی سیاست میں

لاہور : عظمیٰ بخاری کا کہنا ہے کہ شہزاد اکبر نے سیاست میں بے ہودہ طریقے متعارف کروائے، میں اپنی بات پر قائم ہوں، پاکستان کے نظام پر سب سے بڑی ڈکیتی شہزاد اکبر نے کی ہے۔

مسلم لیگ ن پنجاب کی ترجمان عظمیٰ بخاری نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ نیا پاکستان جتنا نیا رہا اور جتنی تبدیلی آئی عوام نے دیکھ لی۔ نیا پاکستان اتنا گندا ہوگا کسی کو پتہ نہیں تھا۔ اسلم اقبال نے گذشتہ روز پرانی باتیں کی۔ میاں اسلم اقبال کے حلقے میں اسپیڈ بریکر بنانے پر ان کو مبارکباد پیش کرتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ دو سال لگا کر انھوں نے لاہور کو کچرا کنڈی بنایا ہے۔ کوڑا اٹھانا لوکل گورنمنٹ کا کام ہوتا ہے، ان میں ہمت نہیں لوکل گورنمنٹ کے الیکشن کرواسکے۔ نہ ان کو حقائق کا پتہ ہے نہ تجربہ نام کی چیز ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ایل ڈبلیو ایم سی کی بڈز میں شہباز شریف نے سو بلین ڈالر کی کمی کروائی، بین الاقوامی ماہرین کو بلوا کر کام کروایا۔ یہ شہباز شریف کے بغض میں یہ سب کچھ کررہے ہیں۔ شہباز شریف نے دو ارب کا کانٹریکٹ دیا یہ دو ارب ساٹھ کروڑ میں دینے جارہے ہیں۔

عظمیٰ بخاری نے کہا کہ ہر بات کا الزام شہباز شریف پر ڈال کر فارغ ہوجانا یہ ان کا پرانا وتیرہ ہے۔ ڈھائی سال سے پنجاب میں حکومت ہے تو آپ نے طریقہ کار کیوں نہیں بنایا؟ سیاسی کوڑا تحریک انصاف میں اکھٹا کرلیا، لاہور میں کوڑا چھوڑ دیا۔ لاہور کو ن لیگ کو ووٹ دینے کی سزا دی گئی۔

یہ بھی پڑھیں : شہزاد اکبر کا عظمیٰ بخاری کو بھی ہرجانے کا نوٹس

ترجمان ن لیگ نے کہا کہ انہوں نے پنجاب کی شہباز اسپیڈ کو بریکر لگایا۔ عثمان بزدار پہلے بھی قرنطینہ میں ہی تھے۔ ہر چیز کی قیمت آسمان سے باتیں کررہی ہے۔ یہ نالائق اور نا اہل تو تھے لیکن کرپٹ اور برے بھی ہیں۔ ہم نے آپ کو اکتیس جنوری کی آخری ڈیڈ لائن دی ہے۔ آخری ڈیڈ لائن کی پریس کانفرنس کے بعد بھی لاہور کے مختلف علاقے دیکھ لیں۔

انہوں نے کہا کہ کراچی کو بھی کچرا کنڈی بننے میں ڈھائی سال لگے تھے۔ میں ہاتھوں سے کوڑا اٹھانے کے لئے تیار ہوں۔ آپ کے تعفن زدہ ماحول اور کوڑا زدہ ذہنیت کے ساتھ ہم گزارا کرلیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ بزدار کو شراب لائسنس میں ایک دفعہ بلایا گیا اور شہباز شریف کو اندر کیا ہوا ہے۔ چینی کی قیمت آج پھر سو روپے کلو ہوچکی ہے۔ اب چور ڈاکو کی بات ہم نے نہیں سننی آپ نے جواب دینا ہے۔ اگر یہ استعفی نہیں دیتے تو پھر دیکھے دوسری اسٹیج پر کہاں جاتے ہیں۔ ان کے ایم این اے اور ایم پی ایز عمران خان کے آگے ہاتھ جوڑتے ہیں عوام میں نہ بھیجیں۔

عظمیٰ بخاری نے کہا کہ میں شہزاد اکبر کو پچاس پیسے تو کیا ایک پیسہ بھی نہیں دوں گی، جائے کاوین مساوی کو بھی ایک نوٹس بھیجے۔ میں اپنی بات پر قائم ہوں پاکستان کے نظام پر سب سے بڑی ڈکیتی شہزاد اکبر نے کی ہے۔ میں ایک اور لیگل نوٹس لینے کے لئے تیار ہوں۔

شہزاد اکبر کے خلاف بائیس کروڑ افراد کی جانب سے ہتک عزت کا دعوی ہونا چاہیے۔ شہزاد اکبر نے سیاست میں بے ہودہ طریقے متعارف کروائے۔

ترجمان ن لیگ کا کہنا تھا کہ شہزاد اکبر پاکستان کی سیاست میں گند کرنے کے لئے ہیں۔ میں اس پریس کانفرنس کے بعد اگلے نوٹس کا انتظار کروں گی، ضرور بھیجیئے گا۔ مجھے ہتک عزت کا نوٹس دینے کی بجائے استعفی دے۔ عمران خان کہتے تھے کسی کے باپ کا پیسہ نہیں ہے، ہم بھی پوچھتے ہیں یہ سات ارب روپے شہزاد اکبر سے لے گے۔

متعلقہ خبریں