جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

سب سے سستا تیل پاکستان میں ہے، ملک دیوالیہ تھا، آج کرنٹ اکاؤنٹ پلس میں ہے

سب سے سستا

اسلام آباد : حماد اظہر کا کہنا ہے کہ کوئی دیکھنا چاہتا ہے کرپشن سے کیسے تباہی پھیلتی ہے تو جاؤ سندھ میں جاکر دیکھو، دنیا میں اس وقت سب سے سستا تیل پاکستان میں ہے۔

  • جنہوں نے زندگی میں کبھی کام نہیں کیا انہوں نے ہمیں بتایا معیشت کیسے چلے گی۔
  • سندھ میں آٹے سمیت ہر چیز کی قیمت دیگر صوبوں سے زیادہ ہے۔
  • پاکستان اسٹیل مل ہم نے نہیں مسلم لیگ ن نے 2015 میں بند کی تھی۔
  • سب سے زیادہ پیپلزپارٹی آئی ایم ایف کے پاس گئی۔
  • بلاول نے عوام کی بات انگلش میں اور امریکہ کو اڈے نہ دینے کی بات اردو میں کرتے ہیں۔
  • جو ملک ہمیں ملا تھا وہ دیوالیہ کے قریب تھا۔ آج ہم آٹھ سو ملین ڈالر کرنٹ اکاؤنٹ پلس میں ہیں۔

وفاقی وزیر حماد اظہر نے قومی اسمبلی میں خطاب کرتے ہوئے قائد حزب اختلاف شہباز شریف اور بلاول بھٹو زرداری کو چینلج دیتے ہوئے کہا کہ آپ نے اگر بہادر ہیں تو پھر حقائق سن کر جائیں۔ سابق وزیراعظم نکتہ اعتراض پر کھڑے ہوگئے۔ اسپیکر قومی اسمبلی نے شاہد خاقان عباسی کو موقع نہ دیا۔

حماد اظہر نے شاہد خاقان عابسی کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ وہ شخص ہے جس نے اسپیکر کو جوتا مارنے کا کہا، مگر آج تک معافی نہیں مانگی۔ ہم عوام کے ووٹ لیکر آئے ہیں، دس یا بیس فیصد پر نہیں آئے۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے ابھی ایک نابالغ لیکچر سنا۔ جنہوں نے زندگی میں کبھی کام نہیں کیا انہوں نے ہمیں بتایا معیشت کیسے چلے گی۔ ان میں سننے کی ہمت نہیں، کبھی انگریزی تو کبھی اردو بولی۔ انگریزی بولنے سے کرپشن کے داغ نہیں دھلیں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایک کروڑ 60 لاکھ گھرانوں کو احساس پروگرام میں لائے۔ ان کے دور میں بی آئی ایس پی میں سرکاری افسران پیسے لے رہے تھے۔ مہنگائی کی شرح ساڑھے آٹھ فیصد اور تنخواہیں دس فیصد بڑھائی گئی ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ان کے 5 سال میں کسی ایک سال بھی گروتھ 4 فیصد نہ ہوئی۔ مہنگائی کی شرح 21 فیصد تھی، یہ مہنگائی زیادہ ہونے کی وجہ سے تنخواہیں بھی زیادہ بڑھاتے تھے۔ کوئی دیکھنا چاہتا ہے کرپشن سے کیسے تباہی پھیلتی ہے تو جاؤ سندھ میں جاکر دیکھو۔ چیف جسٹس نے کہا ہے سندھ میں حکومت باہر سے بیٹھا یونس میمن کررہا ہے۔

حماد اظہر نے کہا کہ پاکستان اسٹیل مل ہم نے نہیں مسلم لیگ ن نے 2015 میں بند کی تھی۔ سندھ میں کروڑوں لوگوں کا مستقبل تباہ کردیا گیا۔ سندھ میں آٹے سمیت ہر چیز کی قیمت دیگر صوبوں سے زیادہ ہے۔ سب سے زیادہ پیپلزپارٹی آئی ایم ایف کے پاس گئی۔

ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ دنیا میں اس وقت سب سے سستا تیل پاکستان میں ہے۔ ن لیگ چھپن فیصد تک ڈیلز ٹیکس کے گئے، ہم نے ستر فیصد پر رکھا۔ ہمارے حلقوں میں کتے کاٹنے کی وباء نہیں، ایڈز اور کینسر نہیں پھیلا۔ کہنے کو تو وہاں بڑے بڑے دربار آور محلات بنے ہوئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : بلاول بھٹو زرداری کا بجٹ کی منظوری اور انتخابی قوانین کیخلاف عدالت جانے کا اعلان

وفاقی وزیر نے کہا کہ آج کل کہتے ہیں کہ تھوڑی تھوڑی کرپشن سے ترقی بھی ہوتی ہے۔ اگر کرپشن کے زور پر ترقی ہوتی تو سندھ تو کیلیفورنیا بن چکا ہوتا۔ لائف ٹائم اور ٹیوب ویل صارفین کے لئے الگ سلیب ہے۔ پاکستان کے بجلی کے ٹیرف میں دونوں سلیب کے سب سے کم ریٹ ہے۔

حماد اظہر کا کہنا تھا کہ پیپلز پارٹی امریکہ کو کہتی تھی کہ ڈرون مارتے جاؤ۔ لوگ مرتے ہیں تو ہم مذمت کرتے جائیں گے۔ بلاول نے عوام کی بات انگلش میں اور امریکہ کو اڈے نہ دینے کی بات اردو میں کرتے ہیں۔

جو ملک ہمیں ملا تھا وہ دیوالیہ کے قریب تھا۔ آج ہم آٹھ سو ملین ڈالر کرنٹ اکاؤنٹ پلس میں ہیں۔ فارن ایکسچینج ریزرو آج 6 سال کی بلند ترین سطح پر پہنچ چکے ہیں۔ پاکستان کی تاریخ کا سب سے زیادہ قرضہ واپس کرنا پڑرہا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ اپوزیشن کورونا میں افراتفری چاہتے تھے۔ ہم نے اعدادو شمار کے مطابق حکمت عملی بنائی۔ 35 لاکھ کاروباری مرکز کے بجلی کے بل معاف کیئے۔ اس سال ہماری سیمنٹ، یوریا گاڑیوں کی صنعت میں اضافہ ہوا ہے۔ یہ کسان کو پوری قیمت نہیں دیتے تھےْ ہم نے کسان کو پوری قیمت دی اور فائدہ پہنچایا۔ گنے کے کاشتکاروں کو پوری قیمت دی گئی۔

ان کا کہنا تھا کہ پاور سیکٹر میں چار سو ارب اضافی دینا پڑے۔ بجٹ میں سو ارب بجلی کے ترسیلی نظام کے لئے رکھے ہیں۔ کراچی کو ساڑھے پانچ سو میگاواٹ روانہ کی بنیاد پر بجلی دی جارہی ہے۔ پناہ گاہ اور لنگر خانوں کا ایک جال بچھانے کا رہے ہیں۔

متعلقہ خبریں