جی ٹی وی نیٹ ورک
اہم خبریں

درآمدات اور برآمدات کا فرق ڈالر اوپر لے گیا، ہم نے صورتحال بہتر کرلی : عائشہ غوث پاشا

درآمدات اور برآمدات

اسلام آباد : وزیر مملکت کا کہنا ہے کہ کرنٹ اکاؤنٹ خسارے اور درآمدات اور برآمدات میں فرق کے باعث بھی ڈالر اوپر گیا۔

سینٹ اجلاس میں وزیر مملکت برائے خزانہ ڈاکٹر عائشہ غوث پاشا نے سینیٹر محسن عزیز کے توجہ دلاؤ نوٹس پر جواب میں کہا کہ معاشی صورتحال کو سیاسی پوائنٹ اسکورنگ سے نہ جوڑا جائے۔ چار ماہ میں معاشی صورتحال کا یہ حال نہیں ہوا۔

انہوں نے کہا کہ جن معاشی حالات میں ہمیں یہ معشیت ملی وہ سب کے سامنے ہے۔ اتنا برا حال تھا تو حکومت میں کیوں آئے یہ سوال پوچھا جا رہا ہے۔ ہم اکانومی کو ٹھیک کرنے کیلئے ہی آئے حکومت میں ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ڈالر کی گزشتہ ماہ تک 23 فیصد تک شرح بلند ہوئی تھی۔ ساری دنیا کی کرنسی گری ہے، جس میں پاکستان کی کرنسی بھی شامل ہے۔ 23 فیصد ڈالر کی قدر میں اضافہ ہوا، اس میں 12 فیصد وجہ گلوبل تھی۔

یہ بھی پڑھیں : دوست ممالک انتظار میں ہیں کہ آئی ایم ایف پیکیج دے تو وہ امداد کریں : مِفتاح اسماعیل

وزیر مملکت نے کہا کہ کرنٹ اکاؤنٹ خسارے اور درآمدات اور برآمدات میں فرق کے باعث بھی ڈالر اوپر گیا، جب آپ نے امپورٹس کو اس حد تک بڑھایا تو ڈالر پر دباؤ آنا تھا۔ ہم نے صورتحال کو بہتر کرنے کی کوشش کی۔ نتیجہ یہ نکلا ہے کہ گزشتہ تین دن سے ڈالر نیچے روپیہ مستحکم ہو رہا ہے۔

عائشہ غوث پاشا کا کہنا تھا کہ ہم اپنی کوشش میں کامیاب ہو رہے ہیں، اس کی حوصلہ افزائی ہونی چاہیے۔ گزشتہ مہینوں میں امپورٹس کی کمیوڈیٹی میں توانائی کا بوجھ تھا۔ گزشتہ حکومت نے جو فیصلے لینے چاہیے تھے، وہ نہیں لئے گئے۔ ہمیں آکر وہ تمام فیصلے لینے پڑے، جس کے اثرات اب آنا شروع ہوئے۔

متعلقہ خبریں