ورلڈ کپ کے ممکنہ کھلاڑیوں کے فٹنس ٹیسٹ لاہور میں جاری

لاہور: ممکنہ ورلڈ کپ کھلاڑیوں کے فٹنس ٹیسٹ نیشنل کرکٹ اکیڈمی لاہور میں جاری، وکٹ کیپر بیٹسمین محمد رضوان ٹاپ اسکورر، عابد علی اور یاسر شاہ ناکام

تفصیلات کے مطابق ورلڈ کپ 2019 میں پاکستان کی نمائندگی کرنے کیلئے ممکنہ کھلاڑیوں کے فٹنس ٹیسٹ نیشنل کرکٹ اکیڈمی لاہور میں ہو رہے ہیں۔

ذرائع کے مطابق قومی کرکٹرز کے یو یو ٹیسٹ کا پہلا مرحلہ مکمل ہوگیا ہے، پہلے مرحلے میں وکٹ کیپر بیٹسمین محمد رضوان ٹاپ اسکورر رہے، انہوں نے 20 پوائنٹس حاصل کیے، شان مسعود 19 پوائنٹس کے ساتھ دوسرے جبکہ حسن علی ٹیسٹ میں تیسرے نمبر پر ہیں۔

قومی کرکٹر عابد علی ٹیسٹ پاس کرنے میں ناکام ہوگئے ہیں جبکہ یاسر شاہ بھی یو یو ٹیسٹ کا مطلوبہ ہدف حاصل نہ کر سکے۔

الراؤنڈر محمد حفیظ، کپتان سرفراز احمد یو یو ٹیسٹ میں پاس ہوگئے ان کا اسکور 17.4 رہا، عماد وسیم فٹنس ٹیسٹ دینے صبح کے سیشن میں نہیں آئے ان کا ٹیسٹ بعد میں لیا جائے گا۔

یویو ٹیسٹ کے بعد بیپ ٹیسٹ اور دو کلو میٹر دوڑ کا مقابلہ ہوگا، فٹنس ٹیسٹ کے تمام مراحل آج ہی مکمل کیے جائیں گے۔

واضح رہے کہ ورلڈ کپ کے لئے پاکستان ٹیم کا اعلان 18 اپریل کو کیا جائے گا، پاکستان کرکٹ بورڈ نے فٹنس ٹیسٹ کیلئے 23 کھلاڑیوں کی فہرست تیار کی تھی، محمد نواز کا فٹنس ٹیسٹ 13 اپریل کو ہوا تھا اور دیگر 22 کھلاڑیوں کے ٹیسٹ آج قذافی اسٹیڈیم میں ہو رہے ہیں۔

قومی سلیکشن کمیٹی، ہیڈ کوچ مکی آرتھر اور میڈیکل پینل کھلاڑیوں کے ٹیسٹ کی نگرانی کررہے ہیں، ورلڈکپ 2019 میں پندرہ رکنی ورلڈ کپ اسکواڈ کے ساتھ 2 ریزرو کھلاڑی بھی انگلینڈ جائیں گے۔

16 اور17 اپریل کو بقیہ 22 ممکنہ کھلاڑی قذافی اسٹیڈیم میں ٹریننگ کریں گے، فٹنس ٹیسٹ میں یویو ٹیسٹ، بیپ ٹیسٹ ، رننگ اور دیگر ٹیسٹ لئے جائیں گے، سلیکشن کیلئے یویو ٹیسٹ میں فٹنس کا لیول 17.4 مقرر کیا گیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق ہیڈ کوچ مکی آرتھر نے مقامی کوچز کو کھلاڑیوں کے فٹنس ٹیسٹ لینے سے روک دیا صرف غیر ملکی کوچز ہی قومی کرکٹرز کے فٹنس ٹیسٹ لے رہیں ہیں۔